Skip to main content

وَّالنّٰشِرٰتِ نَشْرًا ۙ

وَٱلنَّٰشِرَٰتِ
قسم ہے ان ہواؤں کی جو پھیلانے والی ہیں۔ نشر کرنے والی ہیں
نَشْرًا
پھیلانا۔ نشر کرنا

تفسیر کمالین شرح اردو تفسیر جلالین:

اور (بادلوں کو) اٹھا کر پھیلاتی ہیں

ابوالاعلی مودودی Abul A'ala Maududi

اور (بادلوں کو) اٹھا کر پھیلاتی ہیں

احمد رضا خان Ahmed Raza Khan

پھر ابھار کر اٹھانے والیاں

احمد علی Ahmed Ali

اوران ہواؤں کی جو بادلوں کو اٹھا کر پھیلاتی ہیں

أحسن البيان Ahsanul Bayan

پھر (ابر کو) ابھار کر پراگندہ کرنے والیوں (١) کی قسم۔

٣۔١ یا ان فرشتوں کی قسم، جو بادلوں کو منتشر کرتے ہیں یا فضائے آسمانی میں اپنے پر پھیلاتے ہیں۔ تاہم امام ابن کثیر اور امام طبری نے ان تینوں ہوائیں مراد لی اور صحیح قرار دیا ہے، جیسے کہ ترجمے میں بھی اسی کو اختیار کیا ہے۔

جالندہری Fateh Muhammad Jalandhry

اور (بادلوں کو) پھاڑ کر پھیلا دیتی ہیں

محمد جوناگڑھی Muhammad Junagarhi

پھر (ابر کو) ابھار کر پراگنده کرنے والیوں کی قسم

محمد حسین نجفی Muhammad Hussain Najafi

جو (بادلوں کو) پھیلانے والی ہیں۔

علامہ جوادی Syed Zeeshan Haitemer Jawadi

اور قسم ہے ان کی جو اشیائ کو منتشر کرنے والی ہیں

طاہر القادری Tahir ul Qadri

اور ان کی قَسم جو بادلوں کو ہر طرف پھیلا دیتی ہیں،