Skip to main content

ذُو الْعَرْشِ الْمَجِيْدُ ۙ

ذُو
والا ہے
ٱلْعَرْشِ
عرش (والا ہے)
ٱلْمَجِيدُ
صاحب فضل و کرم ہے/ بزرگ و برتر ہے

تفسیر کمالین شرح اردو تفسیر جلالین:

عرش کا مالک ہے، بزرگ و برتر ہے

ابوالاعلی مودودی Abul A'ala Maududi

عرش کا مالک ہے، بزرگ و برتر ہے

احمد رضا خان Ahmed Raza Khan

عزت والے عرش کا مالک،

احمد علی Ahmed Ali

عرش کا مالک بڑی شان والا

أحسن البيان Ahsanul Bayan

عرش کا مالک عظمت والا ہے۔ (۱)

۱۵۔۱یعنی تمام مخلوقات سے معظم اور بلند ہے اور عرش، جو سب سے اوپر ہے وہ اس کا مستقر ہے جیسا کہ صحابہ و تابعین اور محدثین کا عقیدہ ہے۔ المجید صاحب فضل و کرم۔

جالندہری Fateh Muhammad Jalandhry

عرش کا مالک بڑی شان والا

محمد جوناگڑھی Muhammad Junagarhi

عرش کا مالک عظمت واﻻ ہے

محمد حسین نجفی Muhammad Hussain Najafi

وہ عرش کامالک (اور) بڑی شان والا ہے۔

علامہ جوادی Syed Zeeshan Haitemer Jawadi

وہ صاحبِ عرش مجید ہے

طاہر القادری Tahir ul Qadri

مالکِ عرش (یعنی پوری کائنات کے تختِ اقتدار کا مالک) بڑی شان والا ہے،