Skip to main content

وَوَجَدَكَ ضَاۤ لًّا فَهَدٰىۖ

وَوَجَدَكَ
اور پایا تجھ کو
ضَآلًّا
راہ بھولا
فَهَدَىٰ
تو اس نے ہدایت بخشی/ رہنمائی کی

تفسیر کمالین شرح اردو تفسیر جلالین:

اور تمہیں ناواقف راہ پایا اور پھر ہدایت بخشی

ابوالاعلی مودودی Abul A'ala Maududi

اور تمہیں ناواقف راہ پایا اور پھر ہدایت بخشی

احمد رضا خان Ahmed Raza Khan

اور تمہیں اپنی محبت میں خود رفتہ پایا تو اپنی طرف راہ دی

احمد علی Ahmed Ali

اور آپ کو (شریعت سے) بے خبر پایا پھر (شریعت کا) راستہ بتایا

أحسن البيان Ahsanul Bayan

اور تجھے راہ بھولا پا کر ہدایت نہیں دی (١)

٧۔١ یعنی تجھے دین شریعت اور ایمان کا پتہ نہیں تھا، ہم نے تجھے راہ یاب کیا، نبوت سے نوازا اور کتاب نازل کی، ورنہ اس سے قبل تو ہدایت کے لئے سرگرداں تھا۔

جالندہری Fateh Muhammad Jalandhry

اور رستے سے ناواقف دیکھا تو رستہ دکھایا

محمد جوناگڑھی Muhammad Junagarhi

اور تجھے راه بھوﻻ پا کر ہدایت نہیں دی

محمد حسین نجفی Muhammad Hussain Najafi

اور آپ(ص) کو گمنام پایا تو (لوگوں کو آپ(ص) کی طرف) راہنمائی کی۔

علامہ جوادی Syed Zeeshan Haitemer Jawadi

اور کیا تم کو گم گشتہ پاکر منزل تک نہیں پہنچایا ہے

طاہر القادری Tahir ul Qadri

اور اس نے آپ کو اپنی محبت میں خود رفتہ و گم پایا تو اس نے مقصود تک پہنچا دیا۔ یا- اور اس نے آپ کو بھٹکی ہوئی قوم کے درمیان (رہنمائی فرمانے والا) پایا تو اس نے (انہیں آپ کے ذریعے) ہدایت دے دی۔٭، ٭ اِس ترجہ میں ضالاً کو فَھَدٰی کا مفعولِ مقدم قرار دیا گیا ہے۔ (ملاحظہ ہو: التفسیر الکبیر، القرطبی، البحر المحیط، روح البیان، الشفاء اور شرح خفاجی)