Skip to main content

اِنْ يُّوْحٰۤى اِلَىَّ اِلَّاۤ اَنَّمَاۤ اَنَاۡ نَذِيْرٌ مُّبِيْنٌ

إِن
نہیں
يُوحَىٰٓ
وحی کی جاتی
إِلَىَّ
میری طرف
إِلَّآ
مگرسوائے اس کے کہ
أَنَّمَآ
بیشک
أَنَا۠
کہ میں ڈرانے ولا ہوں
نَذِيرٌ
کھلم کھلا

تفسیر کمالین شرح اردو تفسیر جلالین:

مجھ کو تو وحی کے ذریعہ سے یہ باتیں صرف اس لیے بتائی جاتی ہیں کہ میں کھلا کھلا خبردار کرنے والا ہوں"

ابوالاعلی مودودی Abul A'ala Maududi

مجھ کو تو وحی کے ذریعہ سے یہ باتیں صرف اس لیے بتائی جاتی ہیں کہ میں کھلا کھلا خبردار کرنے والا ہوں"

احمد رضا خان Ahmed Raza Khan

مجھے تو یہی وحی ہوتی ہے کہ میں نہیں مگر روشن ڈر سنانے والا

احمد علی Ahmed Ali

مجھے تو یہی وحی کیا گیا ہے کہ میں تمہیں صاف صاف ڈراؤں

أحسن البيان Ahsanul Bayan

میری طرف فقط یہی وحی کی جاتی ہے کہ میں صاف صاف آگاہ کر دینے والا ہوں (١)۔

٧٠۔١ یعنی میری ذمہ داری یہی ہے کہ میں وہ فرائض و پیغام تمہیں بتادوں جن کے اختیار کرنے سے تم عذاب الٰہی سے بچ جاؤ گے۔

جالندہری Fateh Muhammad Jalandhry

میری طرف تو یہی وحی کی جاتی ہے کہ میں کھلم کھلا ہدایت کرنے والا ہوں

محمد جوناگڑھی Muhammad Junagarhi

میری طرف فقط یہی وحی کی جاتی ہے کہ میں تو صاف صاف آگاه کر دینے واﻻ ہوں

محمد حسین نجفی Muhammad Hussain Najafi

میری طرف اس لئے وحی کی جاتی ہے کہ میں ایک کھلا ہوا ڈرانے والا ہوں۔

علامہ جوادی Syed Zeeshan Haitemer Jawadi

میری طرف تو صرف یہ وحی آتی ہے کہ میں ایک کھلا ہوا عذاب الہٰی سے ڈرانے والا انسان ہوں

طاہر القادری Tahir ul Qadri

مجھے تو (اﷲ کی طرف سے) وحی کی جاتی ہے مگر یہ کہ میں صاف صاف ڈر سنانے والا ہوں،