Skip to main content

فَاسْتَخَفَّ قَوْمَهٗ فَاَطَاعُوْهُۗ اِنَّهُمْ كَانُوْا قَوْمًا فٰسِقِيْنَ

فَٱسْتَخَفَّ
تو ہلکایا پایا اس نے
قَوْمَهُۥ
اپنی قوم کو
فَأَطَاعُوهُۚ
تو انہوں نے اطاعت کی اس کی
إِنَّهُمْ
بیشک وہ
كَانُوا۟
تھے وہ
قَوْمًا
قوم۔ لوگ
فَٰسِقِينَ
فاسق

تفسیر کمالین شرح اردو تفسیر جلالین:

اُس نے اپنی قوم کو ہلکا سمجھا اور انہوں نے اس کی اطاعت کی، در حقیقت وہ تھے ہی فاسق لوگ

ابوالاعلی مودودی Abul A'ala Maududi

اُس نے اپنی قوم کو ہلکا سمجھا اور انہوں نے اس کی اطاعت کی، در حقیقت وہ تھے ہی فاسق لوگ

احمد رضا خان Ahmed Raza Khan

پھر اس نے اپنی قوم کو کم عقل کرلیا تو وہ اس کے کہنے پر چلے بیشک وہ بے حکم لوگ تھے،

احمد علی Ahmed Ali

پس اس نے اپنی قوم کو احمق بنا دیا پھر ا س کے کہنے میں آ گئے کیو ں کہ وہ بدکار لوگ تھے

أحسن البيان Ahsanul Bayan

اس نے اپنی قوم کو بہلایا پھسلایا اور انہوں نے اسی کی مان لی یقیناً یہ سارے ہی نافرمان لوگ تھے۔

جالندہری Fateh Muhammad Jalandhry

غرض اس نے اپنی قوم کی عقل مار دی۔ اور انہوں نے اس کی بات مان لی۔ بےشک وہ نافرمان لوگ تھے

محمد جوناگڑھی Muhammad Junagarhi

اس نے اپنی قوم کو بہلایا پھسلایا اور انہوں نے اسی کی مان لی، یقیناً یہ سارے ہی نافرمان لوگ تھے

محمد حسین نجفی Muhammad Hussain Najafi

اس طرح اس (فرعون) نے اپنی قوم کو احمق بنایا اور انہوں نے اس کی اطاعت کی۔ بےشک یہ نافرمان قِسم کے لوگ تھے۔

علامہ جوادی Syed Zeeshan Haitemer Jawadi

پس فرعون نے اپنی قوم کو سبک سر بنادیا اور انہوں نے اس کی اطاعت کرلی کہ وہ سب پہلے ہی سے فاسق اور بدکار تھے

طاہر القادری Tahir ul Qadri

پس اُس نے (اِن باتوں سے) اپنی قوم کو بے وقوف بنا لیا، سو اُن لوگوں نے اُس کا کہنا مان لیا، بیشک وہ لوگ ہی نافرمان قوم تھے،