Skip to main content

ذٰلِكَ مَبْلَـغُهُمْ مِّنَ الْعِلْمِ ۗ اِنَّ رَبَّكَ هُوَ اَعْلَمُ بِمَنْ ضَلَّ عَنْ سَبِيْلِهٖ ۙ وَهُوَ اَعْلَمُ بِمَنِ اهْتَدٰى

ذَٰلِكَ
یہی
مَبْلَغُهُم
ان کی انتہا ہے
مِّنَ
سے
ٱلْعِلْمِۚ
علم میں
إِنَّ
بیشک
رَبَّكَ
رب تیرا
هُوَ
وہ
أَعْلَمُ
زیادہ جانتا ہے
بِمَن
اس کو جو
ضَلَّ
بھٹک گیا
عَن
سے
سَبِيلِهِۦ
اس کے راستے
وَهُوَ
اور وہ
أَعْلَمُ
زیادہ جانتا ہے
بِمَنِ
اس کو
ٱهْتَدَىٰ
جو ہدایت پا گیا

تفسیر کمالین شرح اردو تفسیر جلالین:

اِن لوگوں کا مبلغ علم بس یہی کچھ ہے، یہ بات تیرا رب ہی زیادہ جانتا ہے کہ اُس کے راستے سے کون بھٹک گیا ہے اور کون سیدھے راستے پر ہے

ابوالاعلی مودودی Abul A'ala Maududi

اِن لوگوں کا مبلغ علم بس یہی کچھ ہے، یہ بات تیرا رب ہی زیادہ جانتا ہے کہ اُس کے راستے سے کون بھٹک گیا ہے اور کون سیدھے راستے پر ہے

احمد رضا خان Ahmed Raza Khan

یہاں تک ان کے علم کی پہنچ ہے بیشک تمہارا خوب جانتا ہے جو اس کی راہ سے بہکا اور وہ خوب جانتا ہے جس نے راہ پائی،

احمد علی Ahmed Ali

ان کی سمجھ کی یہیں تک رسائی ہے بے شک آپ کا رب اس کو خوب جانتا ہے جو اس کے راستہ سے بہکا اور اس کو بھی خوب جانتا ہے جو راہ پر آیا

أحسن البيان Ahsanul Bayan

یہی ان کے علم کی انتہا ہے۔ آپ کا رب اس سے خوب واقف ہے جو اس کی راہ سے بھٹک گیا ہے اور وہی خوب واقف ہے اس سے بھی جو راہ یافتہ ہے۔

جالندہری Fateh Muhammad Jalandhry

ان کے علم کی انتہا یہی ہے۔ تمہارا پروردگار اس کو بھی خوب جانتا ہے جو اس کے رستے سے بھٹک گیا اور اس سے بھی خوب واقف ہے جو رستے پر چلا

محمد جوناگڑھی Muhammad Junagarhi

یہی ان کے علم کی انتہا ہے۔ آپ کا رب اس سے خوب واقف ہے جو اس کی راه سے بھٹک گیا ہے اور وہی خوب واقف ہےاس سے بھی جو راه یافتہ ہے

محمد حسین نجفی Muhammad Hussain Najafi

ان لوگوں کامبلغ علم یہی ہے (ان کے علم کی رسائی کی حد یہی ہے) آپ(ص) کا پروردگار ہی بہتر جانتا ہے کہ اس کے راستہ سے بھٹکا ہوا کون ہے؟ اور وہی بہتر جانتا ہے کہ راہِ راست پر کون ہے؟

علامہ جوادی Syed Zeeshan Haitemer Jawadi

یہی ان کے علم کی انتہا ہے اور بیشک آپ کا پروردگار خوب جانتا ہے کہ کون اس کے راستہ سے بہک گیا ہے اور کون ہدایت کے راستہ پر ہے

طاہر القادری Tahir ul Qadri

اُن لوگوں کے علم کی رسائی کی یہی حد ہے، بیشک آپ کا رب اس شخص کو (بھی) خوب جانتا ہے جو اُس کی راہ سے بھٹک گیا ہے اور اس شخص کو (بھی) خوب جانتا ہے جِس نے ہدایت پا لی ہے،