Skip to main content

وَّفَجَّرْنَا الْاَرْضَ عُيُوْنًا فَالْتَقَى الْمَاۤءُ عَلٰۤى اَمْرٍ قَدْ قُدِرَۚ

وَفَجَّرْنَا
اور پھاڑ دیا ہم نے
ٱلْأَرْضَ
زمین کو
عُيُونًا
چشموں میں
فَٱلْتَقَى
پس مل گیا
ٱلْمَآءُ
پانی
عَلَىٰٓ
پر
أَمْرٍ
ایک حکم
قَدْ
تحقیق
قُدِرَ
جس کا اندازہ کیا گیا تھا۔ جو مقدر ہوچکا تھا

تفسیر کمالین شرح اردو تفسیر جلالین:

اور یہ سارا پانی اُس کام کو پورا کرنے لیے مل گیا جو مقدر ہو چکا تھا

ابوالاعلی مودودی Abul A'ala Maududi

اور یہ سارا پانی اُس کام کو پورا کرنے لیے مل گیا جو مقدر ہو چکا تھا

احمد رضا خان Ahmed Raza Khan

اور زمین چشمے کرکے بہا دی تو دونوں پانی مل گئے اس مقدار پر جو مقدر تھی

احمد علی Ahmed Ali

اور ہم نے زمین سے چشمے جاری کر دیے پھر جہاں تک پانی کا چڑھاؤ چڑھنا ٹھہر چکا تھاچڑھ آیا

أحسن البيان Ahsanul Bayan

اور زمین سے چشموں کو جاری کر دیا پس اس کام کے لئے جو مقدر کیا گیا تھا (دونوں) پانی جمع ہوگئے۔

جالندہری Fateh Muhammad Jalandhry

اور زمین میں چشمے جاری کردیئے تو پانی ایک کام کے لئے جو مقدر ہوچکا تھا جمع ہوگیا

محمد جوناگڑھی Muhammad Junagarhi

اور زمین سے چشموں کو جاری کر دیا پس اس کام کے لیے جو مقدر کیا گیا تھا (دونوں) پانی جمع ہو گئے

محمد حسین نجفی Muhammad Hussain Najafi

اور ہم نے زمین سے چشمے جاری کر دئیے پس (دونوں) پانی آپس میں مل گئے ایک کام کیلئے جو مقدر ہو چکا تھا۔

علامہ جوادی Syed Zeeshan Haitemer Jawadi

اور زمین سے بھی چشمے جاری کردیئے اور پھر دونوں پانی ایک خاص مقررہ مقصد کے لئے باہم مل گئے

طاہر القادری Tahir ul Qadri

اور ہم نے زمین سے چشمے جاری کر دیئے، سو (زمین و آسمان کا) پانی ایک ہی کام کے لئے جمع ہو گیا جو (اُن کی ہلاکت کے لئے) پہلے سے مقرر ہو چکا تھا،