Skip to main content

اِنَّاۤ اَرْسَلْنَا عَلَيْهِمْ رِيْحًا صَرْصَرًا فِىْ يَوْمِ نَحْسٍ مُّسْتَمِرٍّۙ

إِنَّآ
بیشک ہم نے
أَرْسَلْنَا
بھیجا ہم نے
عَلَيْهِمْ
ان پر
رِيحًا
ایک ہوا کو
صَرْصَرًا
تند۔ تیز
فِى
يَوْمِ
ایک دن
نَحْسٍ
نحوست کے
مُّسْتَمِرٍّ
مستقل۔ مسلسل

تفسیر کمالین شرح اردو تفسیر جلالین:

ہم نے ایک پیہم نحوست کے دن سخت طوفانی ہوا اُن پر بھیج دی جو لوگوں کو اٹھا اٹھا کر اس طرح پھینک رہی تھی

ابوالاعلی مودودی Abul A'ala Maududi

ہم نے ایک پیہم نحوست کے دن سخت طوفانی ہوا اُن پر بھیج دی جو لوگوں کو اٹھا اٹھا کر اس طرح پھینک رہی تھی

احمد رضا خان Ahmed Raza Khan

بیشک ہم نے ان پر ایک سخت آندھی بھیجی ایسے دن میں جس کی نحوست ان پر ہمیشہ کے لیے رہی

احمد علی Ahmed Ali

بے شک ہم نے ایک دن سخت آندھی بھیجی تھی جس کی نحوست دائمی تھی

أحسن البيان Ahsanul Bayan

ہم نے ان پر تیز و تند مسلسل چلنے والی ہوا، ایک منحوس دن میں بھیج دی (١)

١٩۔١ کہتے ہیں یہ بدھ کی شام تھی، جب اس تند، یخ اور شاں شاں کرتی ہوئی ہوا کا آغاز ہوا، پھر مسلسل ٧ راتیں اور ٨ دن چلتی رہی۔ یہ ہوا گھروں اور قلعوں میں بند انسانوں کو بھی وہاں سے اٹھاتی اور اس طرح زور سے انہیں زمین پر پٹختی کہ ان کے سر ان کے دھڑوں سے الگ ہو جاتے۔ یہ دن ان کے لیے عذاب کے اعتبار سے منحوس ثابت ہوا۔ اس کا یہ مطلب نہیں ہے کہ بدھ کے دن میں یا کسی اور دن میں نحوست ہے، جیسا کہ بعض لوگ سمجھتے ہیں۔ مستمر کا مطلب، یہ عذاب اس وقت تک جاری رہا جب تک سب ہلاک نہیں ہوگئے ۔

جالندہری Fateh Muhammad Jalandhry

ہم نے ان پر سخت منحوس دن میں آندھی چلائی

محمد جوناگڑھی Muhammad Junagarhi

ہم نے ان پر تیز وتند مسلسل چلنے والی ہوا، ایک پیہم منحوس دن میں بھیج دی

محمد حسین نجفی Muhammad Hussain Najafi

ہم نے ان پر تیز و تند آندھی بھیجی دائمی نحوست والے دن میں۔

علامہ جوادی Syed Zeeshan Haitemer Jawadi

ہم نے ان کی اوپر تیز و تند آندھی بھیج دی ایک مسلسل نحوست والے منحوس دن میں

طاہر القادری Tahir ul Qadri

بیشک ہم نے اُن پر نہایت سخت آواز والی تیز آندھی (اُن کے حق میں) دائمی نحوست کے دن میں بھیجی،