Skip to main content

اِنْ هٰذَاۤ اِلَّا خُلُقُ الْاَوَّلِيْنَۙ

إِنْ
نہیں
هَٰذَآ
یہ
إِلَّا
مگر
خُلُقُ
عادت
ٱلْأَوَّلِينَ
پہلوں کی

تفسیر کمالین شرح اردو تفسیر جلالین:

یہ باتیں تو یوں ہی ہوتی چلی آئی ہیں

ابوالاعلی مودودی Abul A'ala Maududi

یہ باتیں تو یوں ہی ہوتی چلی آئی ہیں

احمد رضا خان Ahmed Raza Khan

یہ تو نہیں مگر وہی اگلوں کی ریت

احمد علی Ahmed Ali

یہ تو بس پہلے لوگوں کی ایک عادت ہے

أحسن البيان Ahsanul Bayan

یہ تو بس پرانے لوگوں کی عادت ہے (١)

١٣٧۔١ یعنی وہی باتیں ہیں جو پہلے بھی لوگ کرتے آئے ہیں یا یہ مطلب ہے کہ ہم جس دین اور عادات و روایات پر قائم ہیں، وہ وہی ہیں جن پر ہمارے آباء و اجداد کار بند رہے، مطلب دونوں سورتوں میں یہ ہے کہ ہم آبائی مذہب کو نہیں چھوڑ سکتے۔

جالندہری Fateh Muhammad Jalandhry

یہ تو اگلوں ہی کے طریق ہیں

محمد جوناگڑھی Muhammad Junagarhi

یہ تو بس پرانے لوگوں کی عادت ہے

محمد حسین نجفی Muhammad Hussain Najafi

یہ (ڈراوا) تو بس اگلے لوگوں کی عادت ہے۔

علامہ جوادی Syed Zeeshan Haitemer Jawadi

یہ ڈرانا دھمکانا تو پرانے لوگوں کی عادت ہے

طاہر القادری Tahir ul Qadri

یہ (اور) کچھ نہیں مگر صرف پہلے لوگوں کی عادات (و اطوار) ہیں (جنہیں ہم چھوڑ نہیں سکتے)،