Skip to main content

اَ لَّا تَعْلُوْا عَلَىَّ وَأْتُوْنِىْ مُسْلِمِيْنَ

أَلَّا
کہ نہ
تَعْلُوا۟
سرکشی کرو
عَلَىَّ
مجھ پر
وَأْتُونِى
اور آجاؤ میرے پاس
مُسْلِمِينَ
فرمانبردار ہوکر

تفسیر کمالین شرح اردو تفسیر جلالین:

مضمون یہ ہے کہ “میرے مقابلے میں سرکشی نہ کرو اور مسلم ہو کر میرے پاس حاضر ہو جاؤ"

ابوالاعلی مودودی Abul A'ala Maududi

مضمون یہ ہے کہ “میرے مقابلے میں سرکشی نہ کرو اور مسلم ہو کر میرے پاس حاضر ہو جاؤ"

احمد رضا خان Ahmed Raza Khan

یہ کہ مجھ پر بلندی نہ چاہو اور گردن رکھتے میرے حضور حاضر ہو

احمد علی Ahmed Ali

میرے سامنے تکبر نہ کرو اور میرے پاس مطیع ہو کر چلی آؤ

أحسن البيان Ahsanul Bayan

یہ کہ تم میرے سامنے سرکشی نہ کرو اور مسلمان بن کر میرے پاس آجاؤ (١)

٣١۔١ جس طرح نبی صلی اللہ علیہ وسلم نے بھی بادشاہوں کو خطوط لکھے تھے، جن میں انہیں اسلام قبول کرنے کی دعوت دی گئی تھی۔ اسی طرح سلیمان علیہ السلام نے بھی اسے اسلام قبول کرنے کی دعوت بذریعہ خط دی۔ آج کل مکتوب الیہ کا نام خط میں پہلے لکھا جاتا ہے لیکن سلف کا طریقہ یہی تھا جو حضرت سلیمان علیہ السلام نے اختیار کیا کہ پہلے اپنا نام تحریر کیا ۔

جالندہری Fateh Muhammad Jalandhry

(بعد اس کے یہ) کہ مجھے سرکشی نہ کرو اور مطیع ومنقاد ہو کر میرے پاس چلے آؤ

محمد جوناگڑھی Muhammad Junagarhi

یہ کہ تم میرے سامنے سرکشی نہ کرو اور مسلمان بن کر میرے پاس آجاؤ

محمد حسین نجفی Muhammad Hussain Najafi

تم میرے مقابلہ میں سرکشی نہ کرو اور فرمانبردار ہوکر میرے پاس آجاؤ۔

علامہ جوادی Syed Zeeshan Haitemer Jawadi

دیکھو میرے مقابلہ میں سرکشی نہ کرو اور اطاعت گزار بن کر چلے آؤ

طاہر القادری Tahir ul Qadri

(اس کامضمون یہ ہے) کہ تم لوگ مجھ پر سربلندی (کی کوشش) مت کرو اور فرمانبردار ہو کر میرے پاس آجاؤ،