Skip to main content

يُرِيْدُوْنَ اَنْ يَّخْرُجُوْا مِنَ النَّارِ وَمَا هُمْ بِخَارِجِيْنَ مِنْهَا ۖ وَلَهُمْ عَذَابٌ مُّقِيْمٌ

يُرِيدُونَ
وہ چاہیں گے
أَن
کہ
يَخْرُجُوا۟
وہ نکل جائیں
مِنَ
سے
ٱلنَّارِ
آگ
وَمَا
اور نہیں ہوں گے
هُم
وہ
بِخَٰرِجِينَ
نکلنے والے
مِنْهَاۖ
اس سے
وَلَهُمْ
اور ان کے لیے
عَذَابٌ
عذاب ہے
مُّقِيمٌ
دائمی۔ قائم رہنے والا

تفسیر کمالین شرح اردو تفسیر جلالین:

وہ چاہیں گے کہ دوزخ کی آگ سے نکل بھاگیں مگر نہ نکل سکیں گے اور انہیں قائم رہنے والا عذاب دیا جائے گا

ابوالاعلی مودودی Abul A'ala Maududi

وہ چاہیں گے کہ دوزخ کی آگ سے نکل بھاگیں مگر نہ نکل سکیں گے اور انہیں قائم رہنے والا عذاب دیا جائے گا

احمد رضا خان Ahmed Raza Khan

دوزخ سے نکلنا چاہیں گے اور وہ اس سے نہ نکلیں گے اور ان کو دوامی سزا ہے،

احمد علی Ahmed Ali

وہ چاہیں گے ُکہ آگ سے نکل جائیں حالانکہ وہ اس سے نکلنے والے نہیں اور ان کے لیے دائمی عذاب ہے

أحسن البيان Ahsanul Bayan

یہ چاہیں گے کہ وہ دوزخ میں سے نکل جائیں لیکن یہ ہرگز اس میں سے نہیں نکل سکیں گے، ان کے لئے دوامی عذاب ہیں (١)۔

٣٧۔١ یہ آیت کافروں کے حق میں ہے، کیونکہ مومنوں کو بالاخر سزا کے بعد جہنم سے نکال لیا جائے گا جیسا کہ احادیث سے ثابت ہے۔

جالندہری Fateh Muhammad Jalandhry

(ہر چند) چاہیں گے کہ آگ سے نکل جائیں مگر اس سے نہیں نکل سکیں گے اور ان کے لئے ہمیشہ کا عذاب ہے

محمد جوناگڑھی Muhammad Junagarhi

یہ چاہیں گے کہ دوزخ میں سے نکل جائیں لیکن یہ ہرگز اس میں سے نہ نکل سکیں گے، ان کے لئے تو دوامی عذاب ہیں

محمد حسین نجفی Muhammad Hussain Najafi

وہ چاہیں گے کہ آگ سے نکل جائیں، مگر وہ اس سے کبھی نہیں نکل پائیں گے۔ اور ان کے لئے دائمی عذاب ہے۔

علامہ جوادی Syed Zeeshan Haitemer Jawadi

یہ لوگ چاہتے ہیں جہّنم سے نکل جائیں حالانکہ یہ نکلنے والے نہیں ہیں اور ان کے لئے ایک مستقل عذاب ہے

طاہر القادری Tahir ul Qadri

وہ چاہیں گے کہ (کسی طرح) دوزخ سے نکل جائیں جب کہ وہ اس سے نہیں نکل سکیں گے اور ان کے لئے دائمی عذاب ہے،