Skip to main content

لَّا يُصَدَّعُوْنَ عَنْهَا وَلَا يُنْزِفُوْنَۙ

لَّا
نہ
يُصَدَّعُونَ
سر ڈکھائے جائیں گے
عَنْهَا
اس سے
وَلَا
اور نہ وہ
يُنزِفُونَ
بےجا بولیں گے

تفسیر کمالین شرح اردو تفسیر جلالین:

جسے پی کر نہ اُن کا سر چکرائے گا نہ ان کی عقل میں فتور آئے گا

ابوالاعلی مودودی Abul A'ala Maududi

جسے پی کر نہ اُن کا سر چکرائے گا نہ ان کی عقل میں فتور آئے گا

احمد رضا خان Ahmed Raza Khan

کہ اس سے نہ انہیں درد سر ہو اور نہ ہوش میں فرق آئے

احمد علی Ahmed Ali

نہ اس سے ان کو دردِ سر ہوگا اور نہ اس سے عقل میں فتور آئے گا

أحسن البيان Ahsanul Bayan

جس سے نہ سر میں درد ہو نہ عقل میں فطور آئے (١)

١٩۔١ آخرت کی شراب میں سرور اور لذت تو یقینا ہوگی لیکن یہ خرابیاں مثلاً مدہوشی عقل میں فتور نہیں ہوگا

جالندہری Fateh Muhammad Jalandhry

اس سے نہ تو سر میں درد ہوگا اور نہ ان کی عقلیں زائل ہوں گی

محمد جوناگڑھی Muhammad Junagarhi

جس سے نہ سر میں درد ہو نہ عقل میں فتور آئے

محمد حسین نجفی Muhammad Hussain Najafi

جس سے نہ دردِ سر ہوگا اور نہ عقل میں فتور آئے گا۔

علامہ جوادی Syed Zeeshan Haitemer Jawadi

جس سے نہ درد سر پیدا ہوگا اور نہ ہوش و حواس گم ہوں گے

طاہر القادری Tahir ul Qadri

انہیں نہ تو اُس (کے پینے) سے دردِ سر کی شکایت ہوگی اور نہ ہی عقل میں فتور (اور بدمستی) آئے گی،