Skip to main content

يُّرْسِلِ السَّمَاۤءَ عَلَيْكُمْ مِّدْرَارًا ۙ

يُرْسِلِ
بھیجے گا
ٱلسَّمَآءَ
آسمان کو
عَلَيْكُم
تم پر
مِّدْرَارًا
خوب برسنے والا (بنا کر)

تفسیر کمالین شرح اردو تفسیر جلالین:

وہ تم پر آسمان سے خوب بارشیں برسائے گا

ابوالاعلی مودودی Abul A'ala Maududi

وہ تم پر آسمان سے خوب بارشیں برسائے گا

احمد رضا خان Ahmed Raza Khan

تم پر شراٹے کا (موسلا دھار) مینھ بھیجے گا،

احمد علی Ahmed Ali

وہ آسمان سے تم پر (موسلا داھار) مینہ برسائے گا

أحسن البيان Ahsanul Bayan

وہ تم پر آسمان کو خوب برستا ہوا چھوڑ دے گا (١)

١١۔١ بعض علماء اسی آیت کی وجہ سے نماز استسقاء میں سورہ نوح کے پڑھنے کو مستحب سمجھتے ہیں۔ مروی ہے کہ حضرت عمر بھی ایک مرتبہ نماز استسقاء کے لئے منبر پر چڑھے تو صرف آیات استغفار (جن میں یہ آیت بھی تھی) پڑھ کر منبر سے اتر آئے۔ اور فرمایا کہ میں نے بارش کو، بارش کے ان راستوں سے طلب کیا ہے جو آسمانوں میں ہیں جن سے بارش زمین پر اترتی ہے (ابن کثیر)

جالندہری Fateh Muhammad Jalandhry

وہ تم پر آسمان سے لگاتار مینہ برسائے گا

محمد جوناگڑھی Muhammad Junagarhi

وه تم پر آسمان کو خوب برستا ہوا چھوڑ دے گا

محمد حسین نجفی Muhammad Hussain Najafi

وہ تم پر آسمان سے موسلادھار بارش برسائے گا۔

علامہ جوادی Syed Zeeshan Haitemer Jawadi

وہ تم پر موسلا دھار پانی برسائے گا

طاہر القادری Tahir ul Qadri

وہ تم پر بڑی زوردار بارش بھیجے گا،