Skip to main content

قَالَ لَا تُؤَاخِذْنِىْ بِمَا نَسِيْتُ وَلَا تُرْهِقْنِىْ مِنْ اَمْرِىْ عُسْرًا

قَالَ
کہا
لَا
نہ
تُؤَاخِذْنِى
آپ مؤاخذہ کیجئے میرا/ نہ پکڑئیے مجھ کو
بِمَا
ساتھ اس کے جو
نَسِيتُ
میں بھول جاؤں
وَلَا
اور نہ
تُرْهِقْنِى
آپ مجھ پر چھا جائیے
مِنْ
میں سے
أَمْرِى
میرے معاملے
عُسْرًا
تنگی کے ساتھ/ سختی کے ساتھ

تفسیر کمالین شرح اردو تفسیر جلالین:

موسیٰؑ نے کہا "بھول چوک پر مجھے نہ پکڑیے میرے معاملے میں آپ ذرا سختی سے کام نہ لیں"

ابوالاعلی مودودی Abul A'ala Maududi

موسیٰؑ نے کہا "بھول چوک پر مجھے نہ پکڑیے میرے معاملے میں آپ ذرا سختی سے کام نہ لیں"

احمد رضا خان Ahmed Raza Khan

کہا مجھ سے میری بھول پر گرفت نہ کرو اور مجھ پر میرے کام میں مشکل نہ ڈالو،

احمد علی Ahmed Ali

کہا میرے بھول جانے پر گرفت نہ کر اورمیرے معاملہ میں سختی نہ کر

أحسن البيان Ahsanul Bayan

موسٰی نے جواب دیا کہ میری بھول پر مجھے نہ پکڑیئے اور مجھے اپنے کام میں تنگی نہ ڈالیئے (١)۔

٧٣۔١ یعنی میرے ساتھ نرمی کا معاملہ کریں، سختی کا نہیں۔

جالندہری Fateh Muhammad Jalandhry

(موسیٰ نے) کہا کہ جو بھول مجھ سے ہوئی اس پر مواخذہ نہ کیجیئے اور میرے معاملے میں مجھ پر مشکل نہ ڈالئے

محمد جوناگڑھی Muhammad Junagarhi

موسیٰ نے جواب دیا کہ میری بھول پر مجھے نہ پکڑیئے اور مجھے اپنے کام میں تنگی میں نہ ڈالیے

محمد حسین نجفی Muhammad Hussain Najafi

موسیٰ نے کہا جو بھول ہوگئی اس پر مجھ سے مؤاخذہ نہ کریں اور اس معاملہ میں مجھ سے زیادہ سختی نہ کریں۔

علامہ جوادی Syed Zeeshan Haitemer Jawadi

موسٰی نے کہا کہ خیر جو فروگزاشت ہوگئی اس کا مواخذہ نہ کریں اور معاملات میں اتنی سختی سے کام نہ لیں

طاہر القادری Tahir ul Qadri

موسٰی (علیہ السلام) نے کہا: آپ میری بھول پر میری گرفت نہ کریں اور میرے (اس) معاملہ میں مجھے زیادہ مشکل میں نہ ڈالیں،