Skip to main content

وَمَا تَأْتِيْهِمْ مِّنْ اٰيَةٍ مِّنْ اٰيٰتِ رَبِّهِمْ اِلَّا كَانُوْا عَنْهَا مُعْرِضِيْنَ

وَمَا
اور نہیں
تَأْتِيهِم
آتی ان کے پاس
مِّنْ
کوئی
ءَايَةٍ
نشانی
مِّنْ
میں سے
ءَايَٰتِ
نشانیوں
رَبِّهِمْ
ان کے رب کی
إِلَّا
مگر
كَانُوا۟
ہوتے ہیں وہ
عَنْهَا
اس سے
مُعْرِضِينَ
اعراض برتنے والے

تفسیر کمالین شرح اردو تفسیر جلالین:

اِن کے سامنے اِن کے رب کی آیات میں سے جو آیت بھی آتی ہے یہ اس کی طرف التفات نہیں کرتے

ابوالاعلی مودودی Abul A'ala Maududi

اِن کے سامنے اِن کے رب کی آیات میں سے جو آیت بھی آتی ہے یہ اس کی طرف التفات نہیں کرتے

احمد رضا خان Ahmed Raza Khan

اور جب کبھی ان کے رب کی نشانیوں سے کوئی نشانی ان کے پاس آتی ہے تو اس سے منہ پھیرلیتے ہیں،

احمد علی Ahmed Ali

اوران کے پاس ان کے رب کی نشانیوں میں سے ایسی کوئی بھی نشانی نہیں آتی جس سے وہ منہ موڑ لیتے ہوں

أحسن البيان Ahsanul Bayan

اور ان کے پاس تو ان کے رب کی نشانیوں میں سے کوئی نشانی ایسی نہیں آتی جس سے یہ بےرخی نہ برتتے ہوں (١)۔

٤٦۔١ یعنی توحید اور صداقت رسول کی نشانی بھی ان کے سامنے آتی، اس میں یہ غور ہی نہیں کرتے کہ جس سے ان کو فائدہ ہو، ہر نشانی سے اعراض ان کا شیوہ ہے۔

جالندہری Fateh Muhammad Jalandhry

اور ان کے پاس ان کے پروردگار کی کوئی نشانی نہیں آتی مگر اس سے منہ پھیر لیتے ہیں

محمد جوناگڑھی Muhammad Junagarhi

اور ان کے پاس تو ان کے رب کی نشانیوں میں سے کوئی نشانی ایسی نہیں آئی جس سے یہ بے رخی نہ برتتے ہوں

محمد حسین نجفی Muhammad Hussain Najafi

اور ان کے پروردگار کی نشانیوں میں سے کوئی نشانی بھی ان کے پاس نہیں آتی مگر یہ کہ وہ اس سے روگردانی کرتے ہیں۔

علامہ جوادی Syed Zeeshan Haitemer Jawadi

تو ان کے پاس خدا کی نشانیوں میں سے کوئی نشانی نہیں آتی ہے مگر یہ کہ یہ کنارہ کشی اختیار کرلیتے ہیں

طاہر القادری Tahir ul Qadri

اور اُن کے رب کی نشانیوں میں سے کوئی (بھی) نشانی اُن کے پاس نہیں آتی مگر وہ اس سے رُوگردانی کرتے ہیں،