Skip to main content

فَانْطَلَقُوْا وَهُمْ يَتَخَافَتُوْنَۙ

فَٱنطَلَقُوا۟
تو وہ چل دئیے
وَهُمْ
اور وہ
يَتَخَٰفَتُونَ
چپکے چپکے باتیں کررہے تھے

تفسیر کمالین شرح اردو تفسیر جلالین:

چنانچہ وہ چل پڑے اور آپس میں چپکے چپکے کہتے جاتے تھے

ابوالاعلی مودودی Abul A'ala Maududi

چنانچہ وہ چل پڑے اور آپس میں چپکے چپکے کہتے جاتے تھے

احمد رضا خان Ahmed Raza Khan

تو چلے اور آپس میں آہستہ آہستہ کہتے جاتے تھے کہ

احمد علی Ahmed Ali

پھر وہ آپس میں چپکے چپکے یہ کہتے ہوئے چلے

أحسن البيان Ahsanul Bayan

پھر جب یہ چپکے چپکے یہ باتیں کرتے ہوئے چلے (١)

٢٣۔١ یعنی باغ کی طرف جانے کے لئے ایک تو صبح صبح نکلے دوسرے آہستہ آہستہ باتیں کرتے ہوئے گئے تاکہ کسی کو ان کے جانے کا علم نہ ہو۔

جالندہری Fateh Muhammad Jalandhry

تو وہ چل پڑے اور آپس میں چپکے چپکے کہتے جاتے تھے

محمد جوناگڑھی Muhammad Junagarhi

پھر یہ سب چپکے چپکے یہ باتیں کرتے ہوئے چلے

محمد حسین نجفی Muhammad Hussain Najafi

تو وہ اس حال میں چل پڑے کہ چپکے چپکے ایک دوسرے سے کہتے جاتے تھے۔

علامہ جوادی Syed Zeeshan Haitemer Jawadi

پھر سب گئے اس عالم میں کہ آپس میں راز دارانہ باتیں کررہے تھے

طاہر القادری Tahir ul Qadri

سو وہ لوگ چل پڑے اور وہ آپس میں چپکے چپکے کہتے جاتے تھے،