Skip to main content

قَالُـوْۤا اِنَّاۤ اِلٰى رَبِّنَا مُنْقَلِبُوْنَۚ

قَالُوٓا۟
انہوں نے کہا
إِنَّآ
بیشک ہم
إِلَىٰ
طرف
رَبِّنَا
اپنے رب کی
مُنقَلِبُونَ
لوٹنے والے ہیں

تفسیر کمالین شرح اردو تفسیر جلالین:

انہوں نے جواب دیا "بہر حال ہمیں پلٹنا اپنے رب ہی کی طرف ہے

ابوالاعلی مودودی Abul A'ala Maududi

انہوں نے جواب دیا "بہر حال ہمیں پلٹنا اپنے رب ہی کی طرف ہے

احمد رضا خان Ahmed Raza Khan

بولے ہم اپنے رب کی طرف پھرنے والے ہیں

احمد علی Ahmed Ali

انہوں نے کہا ہمیں تو اپنے رب کی طرف لوٹ کر جانا ہی ہے

أحسن البيان Ahsanul Bayan

انہوں نے جواب دیا کہ ہم (مر کر) اپنے مالک ہی کے پاس جائیں گے (١)

١٢٥۔١ اس کا ایک مفہوم تو یہ ہے کہ اگر ہمارے ساتھ ایسا معاملہ کرے گا تو تجھے بھی اس بات کے لئے تیار رہنا چاہیے کہ قیامت والے دن اللہ تعالٰی تجھے اس جرم کی سخت سزا دے گا اس لئے کہ ہم سب کو مر کر اس کے پاس جانا ہے اس کی سزا سے کون بچ سکتا ہے؟ گویا فرعون کے عذاب دنیا کے مقابلے میں اسے عذاب آخرت سے ڈرایا گیا ہے۔ دوسرا مفہوم یہ ہے کہ موت تو ہمیں آنی ہی آنی ہے اس سے کیا فرق پڑے گا کہ موت سولی پر بھی آئے یا کسی اور طریقے سے۔

جالندہری Fateh Muhammad Jalandhry

وہ بولے کہ ہم تو اپنے پروردگار کی طرف لوٹ کر جانے والے ہیں

محمد جوناگڑھی Muhammad Junagarhi

انہوں نے جواب دیا کہ ہم (مر کر) اپنے مالک ہی کے پاس جائیں گے

محمد حسین نجفی Muhammad Hussain Najafi

انہوں نے کہا (ہمیں کیا پروا ہے) ہم لوگ بہرحال اپنے پروردگار کی طرف پلٹ کر جانے والے ہیں۔

علامہ جوادی Syed Zeeshan Haitemer Jawadi

ان لوگوں نے جواب دیا کہ ہم لوگ بہرحال اپنے پروردگار کی بارگاہ میں پلٹ کر جانے والے ہیں

طاہر القادری Tahir ul Qadri

انہوں نے کہا: بیشک ہم اپنے رب کی طرف پلٹنے والے ہیں،