Skip to main content

قَالَ فَاخْرُجْ مِنْهَا فَاِنَّكَ رَجِيْمٌۙ

قَالَ
فرمایا
فَٱخْرُجْ
پس نکل جا
مِنْهَا
اس سے
فَإِنَّكَ
تو بیشک تو
رَجِيمٌ
مردود ہے

تفسیر کمالین شرح اردو تفسیر جلالین:

رب نے فرمایا "اچھا تو نکل جا یہاں سے کیونکہ تو مردود ہے

ابوالاعلی مودودی Abul A'ala Maududi

رب نے فرمایا "اچھا تو نکل جا یہاں سے کیونکہ تو مردود ہے

احمد رضا خان Ahmed Raza Khan

فرمایا تو جنت سے نکل جا کہ تو مردود ہے،

احمد علی Ahmed Ali

کہا تو آسمان سے نکل جا بے شک تو مردود ہو گیا

أحسن البيان Ahsanul Bayan

فرمایا اب تو بہشت سے نکل جا کیونکہ تو راندہ درگاہ ہے۔

جالندہری Fateh Muhammad Jalandhry

(خدا نے) فرمایا یہاں سے نکل جا۔ تو مردود ہے

محمد جوناگڑھی Muhammad Junagarhi

فرمایا اب تو بہشت سے نکل جا کیوں کہ تو رانده درگاه ہے

محمد حسین نجفی Muhammad Hussain Najafi

ارشاد ہوا (یہاں سے) نکل جا کہ تو مردود (راندہ ہوا) ہے۔

علامہ جوادی Syed Zeeshan Haitemer Jawadi

ارشاد ہوا کہ تو یہاں سے نکل جا کہ تو مردود ہے

طاہر القادری Tahir ul Qadri

(اللہ نے) فرمایا: تو یہاں سے نکل جا پس بیشک تو مردود (راندۂ درگاہ) ہے،

تفسير ابن كثير Ibn Kathir

ابدی لعنت
پھر اللہ تعالیٰ نے اپنی حکومت کا ارادہ کیا جو نہ ٹلے، نہ ٹالا جاسکے کہ تو اس بہترین اور اعلی جماعت سے دور ہوجا تو پھٹکارا ہوا ہے۔ قسامت تک تجھ پر ابدی اور دوامی لعنت برسا کرے گی۔ کہتے ہیں کہ اسی وقت اس کی صورت بد گئی اور اس نے نوحہ خوانی شروع کی، دنیا میں تمام نوحے اسی ابتدا سے ہیں۔ مردود و مطرود ہو کر پھر آتش حسد سے جلتا ہوا آرزو کرتا ہے کہ قیامت تک کی اسے ڈھیل دی جائے اسی کو یوم البعث کہا گیا ہے۔ پس اسکی یہ درخواست منظور کی گئی اور مہلت مل گئی۔