Skip to main content
ARBNDEENIDTRUR
bismillah

الٓرٰ ۗ تِلْكَ اٰيٰتُ الْـكِتٰبِ وَقُرْاٰنٍ مُّبِيْنٍ

تِلْكَ
آیات ہیں
اٰيٰتُ
کتاب کی
الْكِتٰبِ
اور روشن قرآن کی
وَقُرْاٰنٍ مُّبِيْنٍ
اور روشن قرآن کی

ا ل ر یہ آیات ہیں کتاب الٰہی اور قرآن مبین کی

تفسير

رُبَمَا يَوَدُّ الَّذِيْنَ كَفَرُوْا لَوْ كَانُوْا مُسْلِمِيْنَ

رُبَمَا
بعض اوقات۔ اکثر اوقات
يَوَدُّ
چاہتے ہیں۔ چاہیں گے
الَّذِيْنَ
وہ لوگ
كَفَرُوْا
جنہوں نے کفر کیا
لَوْ كَانُوْا
کاش کہ وہ ہوتے
مُسْلِمِيْنَ
مسلمان

بعید نہیں کہ ایک وقت وہ آ جائے جب وہی لوگ جنہوں نے آج (دعوت اسلام کو قبول کرنے سے) انکار کر دیا ہے پچھتا پچھتا کر کہیں گے کہ کاش ہم نے سر تسلیم خم کر دیا ہوتا

تفسير

ذَرْهُمْ يَأْكُلُوْا وَيَتَمَتَّعُوْا وَيُلْهِهِمُ الْاَمَلُ فَسَوْفَ يَعْلَمُوْنَ

ذَرْهُمْ
چھوڑ دو ان کو
يَاْكُلُوْا
کھائیں
وَيَتَمَتَّعُوْا
اور فائدے اٹھائیں
وَيُلْهِهِمُ
اور غافل بنائے ان کو
الْاَمَلُ
امید
فَسَوْفَ
پس عنقریب
يَعْلَمُوْنَ
وہ جان لیں گے

چھوڑو اِنہیں کھائیں، پییں، مزے کریں، اور بھلاوے میں ڈالے رکھے اِن کو جھوٹی امید عنقریب اِنہیں معلوم ہو جائے گا

تفسير

وَمَاۤ اَهْلَـكْنَا مِنْ قَرْيَةٍ اِلَّا وَلَهَا كِتَابٌ مَّعْلُوْمٌ

وَمَآ
اور نہیں
اَهْلَكْنَا
ہلاک کیا ہم نے
مِنْ قَرْيَةٍ
کسی بستی کو
اِلَّا
مگر
وَلَهَا
اور اس کے لیے
كِتَابٌ
نوشتہ ہے
مَّعْلُوْمٌ
معلوم۔ مقرر

ہم نے اِس سے پہلے جس بستی کو بھی ہلاک کیا ہے اس کے لیے ایک خاص مہلت عمل لکھی جاچکی تھی

تفسير

مَا تَسْبِقُ مِنْ اُمَّةٍ اَجَلَهَا وَمَا يَسْتَـٔۡخِرُوْنَ

مَا تَسْبِقُ
نہیں آگے جاسکتی۔ سبقت کرسکتی
مِنْ اُمَّةٍ
کوئی امت۔ کوئی قوم
اَجَلَهَا
اپنے مقرر وقت سے
وَمَا
اور نہ
يَسْتَاْخِرُوْنَ
تاخیر کرسکتی ہے

کوئی قوم نہ اپنے وقت مقرر سے پہلے ہلاک ہوسکتی ہے، نہ اُس کے بعد چھوٹ سکتی ہے

تفسير

وَ قَالُوْا يٰۤاَيُّهَا الَّذِىْ نُزِّلَ عَلَيْهِ الذِّكْرُ اِنَّكَ لَمَجْنُوْنٌۗ

وَقَالُوْا
اور انہوں نے کہا
يٰٓاَيُّھَا الَّذِيْ
اے وہ شخص
نُزِّلَ
اتارا گیا
عَلَيْهِ
جس پر
الذِّكْرُ
ذکر (یعنی قرآن)
اِنَّكَ
یقینا تو
لَمَجْنُوْنٌ
البتہ مجنون ہے

یہ لوگ کہتے ہیں "اے وہ شخص جس پر ذکر نازل ہوا ہے، تو یقیناً دیوانہ ہے

تفسير

لَوْ مَا تَأْتِيْنَا بِالْمَلٰۤٮِٕكَةِ اِنْ كُنْتَ مِنَ الصّٰدِقِيْنَ

لَوْ مَا
کیوں نہیں
تَاْتِيْنَا
لاتے تم ہمارے پاس
بِالْمَلٰۗىِٕكَةِ
فرشتوں کو
اِنْ
اگر
كُنْتَ
ہے تو
مِنَ الصّٰدِقِيْنَ
سچوں میں سے

اگر تو سچا ہے تو ہمارے سامنے فرشتوں کو لے کیوں نہیں آتا؟"

تفسير

مَا نُنَزِّلُ الْمَلٰۤٮِٕكَةَ اِلَّا بِالْحَـقِّ وَمَا كَانُوْۤا اِذًا مُّنْظَرِيْنَ

مَا نُنَزِّلُ
نہیں ہم اتارا کرتے
الْمَلٰۗىِٕكَةَ
فرشتوں کو
اِلَّا
مگر
بِالْحَقِّ
حق کے ساتھ
وَمَا كَانُوْٓا
اور نہیں ہوا کرتے وہ
اِذًا مُّنْظَرِيْنَ
تب مہلت دیے جانے والے

ہم فرشتوں کو یوں ہی نہیں اتار دیا کرتے وہ جب اترتے ہیں تو حق کے ساتھ اترتے ہیں، اور پھر لوگوں کو مہلت نہیں دی جاتی

تفسير

اِنَّا نَحْنُ نَزَّلْنَا الذِّكْرَ وَاِنَّا لَهٗ لَحٰـفِظُوْنَ

اِنَّا
بیشک ہم نے
نَحْنُ
ہم ہی نے
نَزَّلْنَا الذِّكْرَ
اتارا ہم نے ذکر (قرآن)
وَاِنَّا
اور بیشک ہم ہی
لَهٗ
اس کے لیے
لَحٰفِظُوْنَ
البتہ حفاظت کرنے والے ہیں

رہا یہ ذکر، تو اِس کو ہم نے نازل کیا ہے اور ہم خود اِس کے نگہبان ہیں

تفسير

وَلَـقَدْ اَرْسَلْنَا مِنْ قَبْلِكَ فِىْ شِيَعِ الْاَوَّلِيْنَ

وَلَقَدْ
اور البتہ تحقیق
اَرْسَلْنَا
بھیجا ہم نے
مِنْ قَبْلِكَ
آپ سے پہلے (رسولوں کو)
فِيْ شِيَعِ الْاَوَّلِيْنَ
پہلے گروہوں میں

اے محمدؐ، ہم تم سے پہلے بہت سی گزری ہوئی قوموں میں رسول بھیج چکے ہیں

تفسير
کے بارے میں معلومات :
الحجر
القرآن الكريم:الحجر
آية سجدہ (سجدة):-
سورۃ کا نام (latin):Al-Hijr
سورہ نمبر:15
کل آیات:99
کل کلمات:54
کل حروف:2760
کل رکوعات:6
مقام نزول:مکہ مکرمہ
ترتیب نزولی:54
آیت سے شروع:1802