Skip to main content

لَقَدْ جِئْنٰكُمْ بِالْحَـقِّ وَلٰـكِنَّ اَكْثَرَكُمْ لِلْحَقِّ كٰرِهُوْنَ

لَقَدْ
البتہ تحقیق
جِئْنَٰكُم
لائے ہم تمہارے پاس
بِٱلْحَقِّ
حق
وَلَٰكِنَّ
لیکن
أَكْثَرَكُمْ
اکثر تمہارے
لِلْحَقِّ
حق کے لیے
كَٰرِهُونَ
ناگوار تھے

تفسیر کمالین شرح اردو تفسیر جلالین:

ہم تمہارے پاس حق لے کر آئے تھے مگر تم میں سے اکثر کو حق ہی ناگوار تھا"

ابوالاعلی مودودی Abul A'ala Maududi

ہم تمہارے پاس حق لے کر آئے تھے مگر تم میں سے اکثر کو حق ہی ناگوار تھا"

احمد رضا خان Ahmed Raza Khan

بیشک ہم تمہارے پاس حق لائے مگر تم میں اکثر کو حق ناگوار ہے،

احمد علی Ahmed Ali

ہم تو تمہارے پاس سچا دین لا چکےاورلیکن تم میں سے اکثر دین حق سے نفرت کرتے ہیں

أحسن البيان Ahsanul Bayan

ہم تو تمہارے پاس حق لے آئے ہیں لیکن تم میں اکثر لوگ حق (١) سے نفرت رکھنے والے تھے۔

٧٨۔١ یہ اللہ کا ارشاد ہے یا فرشتوں کا ہی قول بطور نیابت الٰہی ہے۔ جیسے کوئی افسر مجاز ' ہم ' کا استعمال حکومت کے مفہوم میں کرتا ہے۔ اکثر سے مراد کل ہے یعنی سارے ہی جہنمی، یا پھر اکثر سے مراد رؤسا اور لیڈر ہیں۔ باقی جہنمی ان کے پیروکار ہونے کی حیثیت سے اس میں شامل ہونگے۔ حق سے مراد، اللہ کا وہ دین اور پیغام ہے جو وہ پیغمبروں کے ذریعے سے ارسال کرتا رہا۔ آخری حق قرآن اور دین اسلام ہے۔

جالندہری Fateh Muhammad Jalandhry

ہم تمہارے پاس حق لے کر آئے ہیں لیکن تم اکثر حق سے ناخوش ہوتے رہے

محمد جوناگڑھی Muhammad Junagarhi

ہم تو تمہارے پاس حق لے آئے لیکن تم میں سے اکثر لوگ حق سے نفرت رکھنے والے تھے؟

محمد حسین نجفی Muhammad Hussain Najafi

بےشک ہم تمہارے پاس (دین) حقلے کر آئے مگر تم میں سے اکثر حق کو ناپسند کرتے رہے۔

علامہ جوادی Syed Zeeshan Haitemer Jawadi

یقینا ہم تمہارے پاس حق لے کر آئے لیکن تمہاری اکثریت حق کو ناپسند کرنے والی ہے

طاہر القادری Tahir ul Qadri

بیشک ہم تمہارے پاس حق لائے لیکن تم میں سے اکثر لوگ حق کو ناپسند کرتے تھے،