Skip to main content

فَدَعَا رَبَّهٗۤ اَنَّ هٰۤؤُلَاۤءِ قَوْمٌ مُّجْرِمُوْنَ‏

فَدَعَا
تو اس نے پکارا
رَبَّهُۥٓ
اپنے رب کو
أَنَّ
بیشک
هَٰٓؤُلَآءِ
یہ
قَوْمٌ
لوگ
مُّجْرِمُونَ
مجرم ہیں مجرم ہیں

تفسیر کمالین شرح اردو تفسیر جلالین:

آخرکار اُس نے اپنے رب کو پکارا کہ یہ لوگ مجرم ہیں

ابوالاعلی مودودی Abul A'ala Maududi

آخرکار اُس نے اپنے رب کو پکارا کہ یہ لوگ مجرم ہیں

احمد رضا خان Ahmed Raza Khan

تو اس نے اپنے رب سے دعا کی کہ یہ مجرم لوگ ہیں،

احمد علی Ahmed Ali

پس اس نے اپنے رب کو پکارا کہ یہ تو مجرم لوگ ہیں

أحسن البيان Ahsanul Bayan

پھر انہوں نے اپنے رب سے دعا کی کہ یہ سب گنہگار لوگ ہیں (١)۔

٢٢۔١ یعنی جب انہوں دیکھا کہ دعوت کا اثر قبول کرنے کی بجائے، اس کا کفر و عناد بڑھ گیا تو اللہ کی بارگاہ میں دعا کے لئے ہاتھ پھیلا دیئے۔

جالندہری Fateh Muhammad Jalandhry

تب موسیٰ نے اپنے پروردگار سے دعا کی کہ یہ نافرمان لوگ ہیں

محمد جوناگڑھی Muhammad Junagarhi

پھر انہوں نے اپنے رب سے دعا کی کہ یہ سب گنہگار لوگ ہیں

محمد حسین نجفی Muhammad Hussain Najafi

پس اس (رسول) نے اپنے پروردگار سے دعا مانگی کہ یہ بڑے مجرم لوگ ہیں۔

علامہ جوادی Syed Zeeshan Haitemer Jawadi

پھر انہوں نے اپنے رب سے رَعا کی کہ یہ قوم بڑی مجرم قوم ہے

طاہر القادری Tahir ul Qadri

پھر انہوں نے اپنے رب سے دعا کی کہ بیشک یہ لوگ مجرم قوم ہیں،