Skip to main content

لَّا يَأْكُلُهٗۤ اِلَّا الْخٰطِئُوْنَ

لَّا
نہیں
يَأْكُلُهُۥٓ
کھائیں گے اس کو
إِلَّا
مگر
ٱلْخَٰطِـُٔونَ
خطا کار

تفسیر کمالین شرح اردو تفسیر جلالین:

جسے خطا کاروں کے سوا کوئی نہیں کھاتا

ابوالاعلی مودودی Abul A'ala Maududi

جسے خطا کاروں کے سوا کوئی نہیں کھاتا

احمد رضا خان Ahmed Raza Khan

اسے نہ کھائیں گے مگر خطاکار

احمد علی Ahmed Ali

اسے سوائے گناہگاروں کے کوئی نہیں کھائے گا

أحسن البيان Ahsanul Bayan

جسے گنہگاروں کے سوا کوئی نہیں کھائے گا۔ (۱)

۳۷۔۱خاطئون سے مراد اہل جہنم ہیں جو کفر و شرک کی وجہ سے جہنم میں داخل ہوں گے اس لیے کہ یہ گناہ ایسے ہیں جو خلود فی النار کا سبب ہیں۔

جالندہری Fateh Muhammad Jalandhry

جس کو گنہگاروں کے سوا کوئی نہیں کھائے گا

محمد جوناگڑھی Muhammad Junagarhi

جسے گناه گاروں کے سوا کوئی نہیں کھائے گا

محمد حسین نجفی Muhammad Hussain Najafi

جسے خطا کاروں کے سوا اور کوئی نہیں کھاتا۔

علامہ جوادی Syed Zeeshan Haitemer Jawadi

جسے گنہگاروں کے علاوہ کوئی نہیں کھاسکتا

طاہر القادری Tahir ul Qadri

جسے گنہگاروں کے سوا کوئی نہ کھائے گا،