Skip to main content

فَمَنِ ابْتَغٰى وَرَاۤءَ ذٰلِكَ فَاُولٰۤٮِٕكَ هُمُ الْعٰدُوْنَۚ

فَمَنِ
پھر جو کوئی
ٱبْتَغَىٰ
تلاش کرے
وَرَآءَ
علاوہ
ذَٰلِكَ
اس کے
فَأُو۟لَٰٓئِكَ
تو یہی لوگ
هُمُ
وہ
ٱلْعَادُونَ
حد سے بڑھنے والے ہیں

تفسیر کمالین شرح اردو تفسیر جلالین:

البتہ جو اس کے علاوہ کچھ اور چاہیں وہی حد سے تجاوز کرنے والے ہیں

ابوالاعلی مودودی Abul A'ala Maududi

البتہ جو اس کے علاوہ کچھ اور چاہیں وہی حد سے تجاوز کرنے والے ہیں

احمد رضا خان Ahmed Raza Khan

تو جو ان دو کے سوا اور چاہے وہی حد سے بڑھنے والے ہیں

احمد علی Ahmed Ali

پس جو کوئی اس کے سوا چاہے سو وہی لوگ حد سے بڑھنے والے ہیں

أحسن البيان Ahsanul Bayan

اب جو کوئی اس کے علاوہ (راہ) ڈھونڈے گا تو ایسے لوگ حد سے گزر جانے والے ہونگے۔

جالندہری Fateh Muhammad Jalandhry

اور جو لوگ ان کے سوا اور کے خواستگار ہوں وہ حد سے نکل جانے والے ہیں

محمد جوناگڑھی Muhammad Junagarhi

اب جو کوئی اس کے علاوه (راه) ڈھونڈے گا توایسے لوگ حد سے گزر جانے والے ہوں گے

محمد حسین نجفی Muhammad Hussain Najafi

اور جو اس سے آگے بڑھے وہ حد سے تجاوز کرنے والے ہیں۔

علامہ جوادی Syed Zeeshan Haitemer Jawadi

پھر جو اس کے علاوہ کا خواہشمند ہو وہ حد سے گزر جانے والا ہے

طاہر القادری Tahir ul Qadri

سو جو ان کے علاوہ طلب کرے تو وہی لوگ حد سے گزرنے والے ہیں،