Skip to main content

اِلَّا مَنْ اَتَى اللّٰهَ بِقَلْبٍ سَلِيْمٍۗ

إِلَّا
مگر
مَنْ
جو
أَتَى
آئے گا
ٱللَّهَ
اللہ کے پاس
بِقَلْبٍ
ساتھ دل کے
سَلِيمٍ
سلامت

تفسیر کمالین شرح اردو تفسیر جلالین:

بجز اس کے کہ کوئی شخص قلب سلیم لیے ہوئے اللہ کے حضور حاضر ہو"

ابوالاعلی مودودی Abul A'ala Maududi

بجز اس کے کہ کوئی شخص قلب سلیم لیے ہوئے اللہ کے حضور حاضر ہو"

احمد رضا خان Ahmed Raza Khan

مگر وہ جو اللہ کے حضور حاضر ہوا سلامت دل لے کر

احمد علی Ahmed Ali

مگر جو الله کے پاس پاک دل لے کر آیا

أحسن البيان Ahsanul Bayan

لیکن فائدہ والا وہی ہوگا جو اللہ تعالٰی کے سامنے بےعیب دل لے کر جائے (١)

٨٩۔١ قلب سلیم یا بےعیب دل سے مراد وہ دل ہے جو شرک سے پاک ہو۔ یعنی کلب مومن۔ اس لئے کافر اور منافق کا دل مریض ہوتا ہے۔ بعض کہتے ہیں، بدعت سے خالی اور سنت پر مطمئن دل، بعض کے نزدیک دنیا کے مال متاع کی محبت سے پاک دل اور بعض کے نزدیک، جہالت کی تاریکیوں اور اخلاقی ذلالتوں سے پاک دل۔ یہ سارے مفہوم بھی صحیح ہو سکتے ہیں۔ اس لئے کہ قلب مومن مذکورہ تمام برائیوں سے پاک ہوتا ہے۔

جالندہری Fateh Muhammad Jalandhry

ہاں جو شخص خدا کے پاس پاک دل لے کر آیا (وہ بچ جائے گا)

محمد جوناگڑھی Muhammad Junagarhi

لیکن فائده واﻻ وہی ہوگا جو اللہ تعالیٰ کے سامنے بے عیب دل لے کر جائے

محمد حسین نجفی Muhammad Hussain Najafi

اور سوائے اس کے جو اللہ کی بارگاہ میں قلبِ سلیم کے ساتھ حاضر ہوگا۔

علامہ جوادی Syed Zeeshan Haitemer Jawadi

مگر وہ جو قلب سلیم کے ساتھ اللہ کی بارگاہ میں حاضر ہو

طاہر القادری Tahir ul Qadri

مگر وہی شخص (نفع مند ہوگا) جو اللہ کی بارگاہ میں سلامتی والے بے عیب دل کے ساتھ حاضر ہوا،