Skip to main content

تَكَادُ السَّمٰوٰتُ يَتَفَطَّرْنَ مِنْهُ وَتَـنْشَقُّ الْاَرْضُ وَتَخِرُّ الْجِبَالُ هَدًّا ۙ

تَكَادُ
قریب ہے کہ
ٱلسَّمَٰوَٰتُ
آسمان
يَتَفَطَّرْنَ
پھٹ پڑیں
مِنْهُ
اس سے
وَتَنشَقُّ
اور شق ہوجائے
ٱلْأَرْضُ
زمین
وَتَخِرُّ
اور گرپڑیں
ٱلْجِبَالُ
پہاڑ
هَدًّا
ٹوٹ کر۔ بھربھرے ہو کر

تفسیر کمالین شرح اردو تفسیر جلالین:

قریب ہے کہ آسمان پھٹ پڑیں، زمین شق ہو جائے اور پہاڑ گر جائیں

ابوالاعلی مودودی Abul A'ala Maududi

قریب ہے کہ آسمان پھٹ پڑیں، زمین شق ہو جائے اور پہاڑ گر جائیں

احمد رضا خان Ahmed Raza Khan

قریب ہے کہ آسمان اس سے پھٹ پڑیں اور زمین شق ہوجائے اور پہاڑ گر جائیں ڈھ کر (مسمار ہوکر)

احمد علی Ahmed Ali

کہ جس سے ابھی آسمان پھٹ جائیں اور زمین چر جائے اور پہاڑ ٹکڑے ہو کر گر پڑیں

أحسن البيان Ahsanul Bayan

قریب ہے کہ اس قول کی وجہ سے آسمان پھٹ جائیں اور زمین شق ہو جائے اور پہاڑ ریزہ ریزہ ہوجائیں

جالندہری Fateh Muhammad Jalandhry

قریب ہے کہ اس (افتراء) سے آسمان پھٹ پڑیں اور زمین شق ہوجائے اور پہاڑ پارہ پارہ ہو کر گر پڑیں

محمد جوناگڑھی Muhammad Junagarhi

قریب ہے کہ اس قول کی وجہ سے آسمان پھٹ جائیں اور زمین شق ہوجائے اور پہاڑ ریزے ریزے ہو جائیں

محمد حسین نجفی Muhammad Hussain Najafi

کہ قریب ہے کہ آسمان پھٹ پڑیں اور زمین شق ہو جائے اور پہاڑ ٹکڑے ٹکڑے ہو کر گر پڑیں۔

علامہ جوادی Syed Zeeshan Haitemer Jawadi

قریب ہے کہ اس سے آسمان پھٹ پڑے اور زمین شگافتہ ہوجائے اور پہاڑ ٹکڑے ٹکڑے ہوکر گر پڑیں

طاہر القادری Tahir ul Qadri

کچھ بعید نہیں کہ اس (بہتان) سے آسمان پھٹ پڑیں اور زمین شق ہو جائے اور پہاڑ ریزہ ریزہ ہو کر گر جائیں،