Skip to main content
bismillah
يَٰٓأَيُّهَا
اے
ٱلَّذِينَ
لوگو !
ءَامَنُوا۟
جو ایمان لائے ہو
لَا
نہ
تُقَدِّمُوا۟
تم پیش قدمی کرو۔ آگے بڑھو
بَيْنَ
يَدَىِ
آگے
ٱللَّهِ
اللہ کے
وَرَسُولِهِۦۖ
اور اس کے رسول کے
وَٱتَّقُوا۟
اور ڈرو
ٱللَّهَۚ
اللہ سے
إِنَّ
بیشک
ٱللَّهَ
اللہ تعالیٰ
سَمِيعٌ
سننے والا ہے
عَلِيمٌ
جاننے والا

اے لوگو جو ایمان لائے ہو، اللہ اور اس کے رسول کے آگے پیش قدمی نہ کرو اور اللہ سے ڈرو، اللہ سب کچھ سننے اور جاننے والا ہے

تفسير
يَٰٓأَيُّهَا
اے
ٱلَّذِينَ
لوگو
ءَامَنُوا۟
جو ایمان لائے ہو
لَا
نہ
تَرْفَعُوٓا۟
بلند کرو
أَصْوَٰتَكُمْ
اپنی آوازوں کو
فَوْقَ
پر
صَوْتِ
آواز پر
ٱلنَّبِىِّ
نبی (صلی اللہ علیہ وآلہ وسلم) کی
وَلَا
اور نہ
تَجْهَرُوا۟
بلند کرو
لَهُۥ
اس کے لیے
بِٱلْقَوْلِ
بات کو
كَجَهْرِ
مانند بلند کرنے کے
بَعْضِكُمْ
تم میں سے بعض کے
لِبَعْضٍ
بعض کے لیے
أَن
کہ
تَحْبَطَ
ضائع ہوجائیں
أَعْمَٰلُكُمْ
اعمال تمہارے
وَأَنتُمْ
اور تم
لَا
نہ
تَشْعُرُونَ
تم شعور رکھتے ہو

اے لوگو جو ایمان لائے ہو، اپنی آواز نبیؐ کی آواز سے بلند نہ کرو، اور نہ نبیؐ کے ساتھ اونچی آواز سے بات کیا کرو جس طرح تم آپس میں ایک دوسرے سے کرتے ہو، کہیں ایسا نہ ہو کہ تمہارا کیا کرایا سب غارت ہو جائے اور تمہیں خبر بھی نہ ہو

تفسير
إِنَّ
بیشک
ٱلَّذِينَ
وہ لوگ
يَغُضُّونَ
جو پست رکھتے ہیں
أَصْوَٰتَهُمْ
اپنی آوازوں کو
عِندَ
پاس
رَسُولِ
رسول
ٱللَّهِ
اللہ (صلی اللہ علیہ وآلہ وسلم)
أُو۟لَٰٓئِكَ
یہی
ٱلَّذِينَ
وہ لوگ ہیں
ٱمْتَحَنَ
جانچ لیا
ٱللَّهُ
اللہ نے
قُلُوبَهُمْ
ان کے دلوں کو
لِلتَّقْوَىٰۚ
تقوی کے لیے
لَهُم
ان کے لیے
مَّغْفِرَةٌ
بخشش ہے
وَأَجْرٌ
اور اجر ہے
عَظِيمٌ
عظیم

جو لوگ رسول خدا کے حضور بات کرتے ہوئے اپنی آواز پست رکھتے ہیں وہ در حقیقت وہی لوگ ہیں جن کے دلوں کو اللہ نے تقویٰ کے لیے جانچ لیا ہے، اُن کے لیے مغفرت ہے اور اجر عظیم

تفسير
إِنَّ
بیشک
ٱلَّذِينَ
وہ لوگ
يُنَادُونَكَ
جو آواز دیتے ہیں آپ کو۔ پکارتے ہیں آپ کو
مِن
سے
وَرَآءِ
پیچھے۔ آگے سے
ٱلْحُجُرَٰتِ
حجروں کے
أَكْثَرُهُمْ
اکثر ان میں سے
لَا
نہیں
يَعْقِلُونَ
عقل رکھتے

اے نبیؐ، جو لوگ تمہیں حجروں کے باہر سے پکارتے ہیں ان میں سے اکثر بے عقل ہیں

تفسير
وَلَوْ
اور اگر
أَنَّهُمْ
بیشک وہ
صَبَرُوا۟
وہ صبر کریں
حَتَّىٰ
یہاں تک کہ
تَخْرُجَ
تم نکلو
إِلَيْهِمْ
ان کی طرف
لَكَانَ
البتہ ہو
خَيْرًا
بہتر
لَّهُمْۚ
ان کے لیے
وَٱللَّهُ
اور اللہ
غَفُورٌ
غفور
رَّحِيمٌ
رحیم ہے

اگر وہ تمہارے برآمد ہونے تک صبر کرتے تو انہی کے لیے بہتر تھا، اللہ درگزر کرنے والا اور رحیم ہے

تفسير
يَٰٓأَيُّهَا
اے
ٱلَّذِينَ
لوگو !
ءَامَنُوٓا۟
جو ایمان لائے ہو
إِن
اگر
جَآءَكُمْ
آئے تمہارے پاس
فَاسِقٌۢ
کوئی فاسق
بِنَبَإٍ
ساتھ ایک خبر کے۔ کسی خبر کے
فَتَبَيَّنُوٓا۟
تو تحقیق کرلیا کرو
أَن
کہ
تُصِيبُوا۟
تم جا پڑو۔ پہنچاؤ
قَوْمًۢا
ایک قوم کو
بِجَهَٰلَةٍ
ساتھ جہالت کے
فَتُصْبِحُوا۟
پھر تم ہوجاؤ
عَلَىٰ
اوپر
مَا
اس کے جو
فَعَلْتُمْ
تم نے کیا
نَٰدِمِينَ
نادم ہونے والے

اے لوگو جو ایمان لائے ہو، اگر کوئی فاسق تمہارے پاس کوئی خبر لے کر آئے تو تحقیق کر لیا کرو، کہیں ایسا نہ ہو کہ تم کسی گروہ کو نادانستہ نقصان پہنچا بیٹھو اور پھر اپنے کیے پر پشیمان ہو

تفسير
وَٱعْلَمُوٓا۟
اور جان لو
أَنَّ
بیشک
فِيكُمْ
تم میں
رَسُولَ
رسول ہیں
ٱللَّهِۚ
اللہ کے
لَوْ
اگر
يُطِيعُكُمْ
وہ اطاعت کریں تمہاری
فِى
میں
كَثِيرٍ
بہت
مِّنَ
سے
ٱلْأَمْرِ
معاملات (میں)
لَعَنِتُّمْ
البتہ مشکل میں پڑجاؤ تم
وَلَٰكِنَّ
لیکن
ٱللَّهَ
اللہ تعالیٰ
حَبَّبَ
دل پسند بنادیا
إِلَيْكُمُ
تمہاری طرف
ٱلْإِيمَٰنَ
ایمان کو
وَزَيَّنَهُۥ
اور اسے سجا دیا۔ مزین کردیا
فِى
میں
قُلُوبِكُمْ
تمہارے دلوں (میں)
وَكَرَّهَ
اور مکروہ کیا ہے۔ متنفر کردیا ہے
إِلَيْكُمُ
تمہاری طرف
ٱلْكُفْرَ
کفر کو
وَٱلْفُسُوقَ
اور گناہ کو
وَٱلْعِصْيَانَۚ
اور نافرمانی کو
أُو۟لَٰٓئِكَ
یہی لوگ
هُمُ
وہ
ٱلرَّٰشِدُونَ
جو راست رو ہیں۔ جو ہدایت یافتہ ہیں

خوب جان رکھو کہ تمہارے درمیان اللہ کا رسول موجود ہے اگر وہ بہت سے معاملات میں تمہاری بات مان لیا کرے تو تم خود ہی مشکلات میں مبتلا ہو جاؤ مگر اللہ نے تم کو ایمان کی محبت دی اور اس کو تمہارے لیے دل پسند بنا دیا، اور کفر و فسق اور نافرمانی سے تم کو متنفر کر دیا

تفسير
فَضْلًا
فضل ہے
مِّنَ
سے
ٱللَّهِ
اللہ کی طرف(سے)
وَنِعْمَةًۚ
اور نعمت
وَٱللَّهُ
اور اللہ
عَلِيمٌ
علم والا ہے
حَكِيمٌ
حکمت والا ہے

ایسے ہی لوگ اللہ کے فضل و احسان سے راست رو ہیں اور اللہ علیم و حکیم ہے

تفسير
وَإِن
اور اگر
طَآئِفَتَانِ
دو گروہ
مِنَ
سے
ٱلْمُؤْمِنِينَ
مومنوں میں(سے)
ٱقْتَتَلُوا۟
باہم لڑ پڑیں
فَأَصْلِحُوا۟
تو صلح کرا دو
بَيْنَهُمَاۖ
ان دونوں کے درمیان
فَإِنۢ
پھر اگر
بَغَتْ
زیادتی کرے
إِحْدَىٰهُمَا
ان دونوں میں سے ایک
عَلَى
پر
ٱلْأُخْرَىٰ
دوسرے (پر)
فَقَٰتِلُوا۟
تو لڑو
ٱلَّتِى
اس سے جو
تَبْغِى
زیادتی کرے
حَتَّىٰ
یہاں تک کہ
تَفِىٓءَ
وہ پلٹ آئے
إِلَىٰٓ
طرف
أَمْرِ
حکم کی طرف
ٱللَّهِۚ
اللہ کے
فَإِن
پھر اگر
فَآءَتْ
وہ پلٹ آئے
فَأَصْلِحُوا۟
تو صلح کرا دو
بَيْنَهُمَا
ان دونوں کے درمیان
بِٱلْعَدْلِ
انصاف کے ساتھ
وَأَقْسِطُوٓا۟ۖ
اور انصاف کرو
إِنَّ
بیشک
ٱللَّهَ
اللہ تعالیٰ
يُحِبُّ
پسند کرتا ہے
ٱلْمُقْسِطِينَ
انصاف کرنے والوں کو

اور اگر اہل ایمان میں سے دو گروہ آپس میں لڑ جائیں تو ان کے درمیان صلح کراؤ پھر اگر ان میں سے ایک گروہ دوسرے گروہ سے زیادتی کرے تو زیادتی کرنے والے سے لڑو یہاں تک کہ وہ اللہ کے حکم کی طرف پلٹ آئے پھر اگر وہ پلٹ آئے تو ان کے درمیان عدل کے ساتھ صلح کرا دو اور انصاف کرو کہ اللہ انصاف کرنے والوں کو پسند کرتا ہے

تفسير
إِنَّمَا
بیشک
ٱلْمُؤْمِنُونَ
مومن
إِخْوَةٌ
بھائی بھائی ہیں
فَأَصْلِحُوا۟
تو صلح کرا دو
بَيْنَ
درمیان
أَخَوَيْكُمْۚ
اپنے بھائیوں کے
وَٱتَّقُوا۟
اور ڈرو
ٱللَّهَ
اللہ سے
لَعَلَّكُمْ
تاکہ تم
تُرْحَمُونَ
تم رحم کیے جاؤ

مومن تو ایک دوسرے کے بھائی ہیں، لہٰذا اپنے بھائیوں کے درمیان تعلقات کو درست کرو اور اللہ سے ڈرو، امید ہے کہ تم پر رحم کیا جائے گا

تفسير
کے بارے میں معلومات :
الحجرات
القرآن الكريم:الحجرات
آية سجدہ (سجدة):-
سورۃ کا نام (latin):Al-Hujurat
سورہ نمبر:49
کل آیات:18
کل کلمات:343
کل حروف:1476
کل رکوعات:2
مقام نزول:مدینہ منورہ
ترتیب نزولی:106
آیت سے شروع:4612