Skip to main content
ARBNDEENIDTRUR
bismillah

طٰسٓمّٓ

طٰسۗمّۗ
ط س م

ط س م

تفسير

تِلْكَ اٰيٰتُ الْـكِتٰبِ الْمُبِيْنِ

تِلْكَ اٰيٰتُ
یہ آیات ہیں
الْكِتٰبِ الْمُبِيْنِ
کتاب روشن کی

یہ کتاب مبین کی آیات ہیں

تفسير

نَـتْلُوْا عَلَيْكَ مِنْ نَّبَاِ مُوْسٰى وَفِرْعَوْنَ بِالْحَـقِّ لِقَوْمٍ يُّؤْمِنُوْنَ

نَتْلُوْا عَلَيْكَ
ہم پڑھتے ہیں آپ پر
مِنْ نَّبَاِ مُوْسٰى
موسیٰ کی خبر میں سے
وَفِرْعَوْنَ
اور فرعون کی
بِالْحَقِّ
حق کے ساتھ/ ٹھیک ٹھیک
لِقَوْمٍ يُّؤْمِنُوْنَ
ایک قوم کے لئے، جو ایمان لاتی ہو

ہم موسیٰؑ اور فرعون کا کچھ حال ٹھیک ٹھیک تمہیں سُناتے ہیں ایسے لوگوں کے فائدے کے لیے جو ایمان لائیں

تفسير

اِنَّ فِرْعَوْنَ عَلَا فِى الْاَرْضِ وَجَعَلَ اَهْلَهَا شِيَـعًا يَّسْتَضْعِفُ طَاۤٮِٕفَةً مِّنْهُمْ يُذَبِّحُ اَبْنَاۤءَهُمْ وَيَسْتَحْىٖ نِسَاۤءَهُمْ ۗ اِنَّهٗ كَانَ مِنَ الْمُفْسِدِيْنَ

اِنَّ فِرْعَوْنَ
بیشک فرعون
عَلَا
اس نے تکبر کیا
فِي الْاَرْضِ
زمین میں
وَجَعَلَ اَهْلَهَا
اور کردیا اس کے رہنے والوں کو
شِيَعًا
گروہوں میں
يَّسْتَضْعِفُ
ضعیف جانتا تھا/ کمزور سمجھتا تھا
طَاۗىِٕفَةً مِّنْهُمْ
ایک گروہ کو، ان میں سے
يُذَ بِّحُ اَبْنَاۗءَهُمْ
ذبح کرتا تھا ان کے بیٹوں کو
وَيَسْتَحْيٖ نِسَاۗءَهُمْ ۭ
اور زندہ رہنے دیتا تھا ان کی عورتوں کو
اِنَّهٗ
بیشک وہ
كَانَ
تھا
مِنَ الْمُفْسِدِيْنَ
فساد کرنے والوں میں سے

واقعہ یہ ہے کہ فرعون نے زمین میں سرکشی کی اور اس کے باشندوں کو گروہوں میں تقسیم کر دیا ان میں سے ایک گروہ کو وہ ذلیل کرتا تھا، اس کے لڑکوں کو قتل کرتا اور اس کی لڑکیوں کو جیتا رہنے دیتا تھا فی الواقع وہ مفسد لوگوں میں سے تھا

تفسير

وَنُرِيْدُ اَنْ نَّمُنَّ عَلَى الَّذِيْنَ اسْتُضْعِفُوْا فِى الْاَرْضِ وَنَجْعَلَهُمْ اَٮِٕمَّةً وَّنَجْعَلَهُمُ الْوٰرِثِيْنَۙ

وَنُرِيْدُ
اور ہم نے چاہا
اَنْ نَّمُنَّ
کہ ہم مہربانی کریں
عَلَي
اوپر
الَّذِيْنَ اسْتُضْعِفُوْا
ان لوگوں کے، جو کمزور بنائے گئے تھے
فِي الْاَرْضِ
زمین میں
وَنَجْعَلَهُمْ
اور ہم بنائیں ان کو
اَىِٕمَّةً
پیشوا/ امام
وَّنَجْعَلَهُمُ
اور ہم بنائیں ان کو
الْوٰرِثِيْنَ
وارث

اور ہم یہ ارادہ رکھتے تھے کہ مہربانی کریں ان لوگوں پر جو زمین میں ذلیل کر کے رکھے گئے تھے اور انہیں پیشوا بنا دیں اور انہی کو وارث بنائیں

تفسير

وَنُمَكِّنَ لَهُمْ فِى الْاَرْضِ وَنُرِىَ فِرْعَوْنَ وَهَامٰنَ وَجُنُوْدَهُمَا مِنْهُمْ مَّا كَانُوْا يَحْذَرُوْنَ

وَنُمَكِّنَ لَهُمْ
اور ہم اقتدار بخشیں ان کو
فِي الْاَرْضِ
زمین میں
وَنُرِيَ
اور ہم دکھائیں
فِرْعَوْنَ
فرعون کو
وَهَامٰنَ
اور ہامان کو
وَجُنُوْدَهُمَا
اور ان دونوں کے لشکروں کو
مِنْهُمْ
ان میں سے
مَّا كَانُوْا يَحْذَرُوْنَ
جو تھے وہ ڈرتے/ اندیشہ کرتے

اور زمین میں ان کو اقتدار بخشیں اور ان سے فرعون و ہامان اور ان کے لشکروں کو وہی کچھ دکھلا دیں جس کا انہیں ڈر تھا

تفسير

وَاَوْحَيْنَاۤ اِلٰۤى اُمِّ مُوْسٰۤى اَنْ اَرْضِعِيْهِۚ فَاِذَا خِفْتِ عَلَيْهِ فَاَ لْقِيْهِ فِى الْيَمِّ وَلَا تَخَافِىْ وَلَا تَحْزَنِىْۚ اِنَّا رَاۤدُّوْهُ اِلَيْكِ وَجٰعِلُوْهُ مِنَ الْمُرْسَلِيْنَ

وَاَوْحَيْنَآ
اور دل میں بات ڈالی ہم نے
اِلٰٓى اُمِّ مُوْسٰٓى
طرف موسیٰ کی ماں کے
اَنْ اَرْضِعِيْهِ ۚ
کہ دودھ پلا اس کو
فَاِذَا
پھر جب
خِفْتِ
تم ڈرو
عَلَيْهِ
اس پر
فَاَلْقِيْهِ
تو پھر ڈال دو اس کو
فِي الْيَمِّ
دریا میں
وَلَا تَخَافِيْ
اور تم غم کرو
وَلَا تَحْـزَنِيْ ۚ
اور نہ تم غم کرو
اِنَّا
بیشک ہم
رَاۗدُّوْهُ
پھیر لانے والے ہیں اس کو
اِلَيْكِ
آپ کی طرف
وَجَاعِلُوْهُ
اور بنانے والے ہیں اس کو
مِنَ الْمُرْسَلِيْنَ
رسولوں میں سے

ہم نے موسیٰؑ کی ماں کو اشارہ کیا کہ "اِس کو دودھ پلا، پھر جب تجھے اُس کی جان کا خطرہ ہو تو اسے دریا میں ڈال دے اور کچھ خوف اور غم نہ کر، ہم اسے تیرے ہی پاس واپس لے آئیں گے اور اس کو پیغمبروں میں شامل کریں گے"

تفسير

فَالْتَقَطَهٗۤ اٰلُ فِرْعَوْنَ لِيَكُوْنَ لَهُمْ عَدُوًّا وَّحَزَنًا ۗ اِنَّ فِرْعَوْنَ وَهَامٰنَ وَجُنُوْدَهُمَا كَانُوْا خٰطِـــِٕيْنَ

اٰلُ فِرْعَوْنَ
تاکہ وہ ہو
لِيَكُوْنَ
ان کے لئے
لَهُمْ
دشمن اور غم کا ذریعہ
عَدُوًّا وَّحَزَنًا ۭ
بیشک فرعون
اِنَّ فِرْعَوْنَ
اور ہامان
وَهَامٰنَ
اور ان کے دونوں کے لشکر
وَجُنُوْدَهُمَا
تھے وہ سب خطار کار/ بھول میں
كَانُوْا خٰطِـــــِٕيْنَ
تھے وہ سب خطار کار/ بھول میں

آ خرکار فرعون کے گھر والوں نے اسے (دریا سے) نکال لیا تاکہ وہ ان کا دشمن اور ان کے لیے سببِ رنج بنے، واقعی فرعون اور ہامان اور اس کے لشکر (اپنی تدبیر میں) بڑے غلط کار تھے

تفسير

وَقَالَتِ امْرَاَتُ فِرْعَوْنَ قُرَّتُ عَيْنٍ لِّىْ وَلَكَ ۗ لَا تَقْتُلُوْهُ ۖ عَسٰۤى اَنْ يَّـنْفَعَنَاۤ اَوْ نَـتَّخِذَهٗ وَلَدًا وَّهُمْ لَا يَشْعُرُوْنَ

وَقَالَتِ
اور کہنے لگی
امْرَاَتُ
بیوی
فِرْعَوْنَ
فرعون کی
قُرَّةُ عَيْنٍ
ٹھنڈک ہے آنکھوں کی
لِّيْ وَلَكَ ۭ
میرے لئے اور تیرے لئے
لَا تَقْتُلُوْهُ ڰ
نہ تم قتل کرو اس کو
عَسٰٓى
امید ہے
اَنْ
کہ
يَّنْفَعَنَآ
وہ نفع دے ہم کو
اَوْ نَتَّخِذَهٗ
یا ہم بنائیں اس کو
وَلَدًا
بیٹا
وَّهُمْ لَا يَشْعُرُوْنَ
اور وہ شعور نہ رکھتے تھے/ نہ سمجھتے تھے

فرعون کی بیوی نے (اس سے) کہا "یہ میرے اور تیرے لیے آنکھوں کی ٹھنڈک ہے، اسے قتل نہ کرو، کیا عجب کہ یہ ہمارے لیے مفید ثابت ہو، یا ہم اسے بیٹا ہی بنا لیں" اور وہ (انجام سے) بے خبر تھے

تفسير

وَاَصْبَحَ فُؤَادُ اُمِّ مُوْسٰى فٰرِغًا ۗ اِنْ كَادَتْ لَـتُبْدِىْ بِهٖ لَوْلَاۤ اَنْ رَّبَطْنَا عَلٰى قَلْبِهَا لِتَكُوْنَ مِنَ الْمُؤْمِنِيْنَ

وَاَصْبَحَ
اور ہوگیا
فُؤَادُ
دل
اُمِّ مُوْسٰى
موسیٰ کی ماں کا
فٰرِغًا ۭ
خالی
اِنْ كَادَتْ
بیشک قریب تھا
لَتُبْدِيْ بِهٖ
کہ ظاہر کردیتی اس کو
لَوْلَآ
اگر نہ
اَنْ رَّبَطْنَا
کہ ہم باندھ دیتے
عَلٰي قَلْبِهَا
اس کے دل پر
لِتَكُوْنَ
تاکہ وہ ہو
مِنَ الْمُؤْمِنِيْنَ
ایمان لانے والوں میں سے

اُدھر موسیٰؑ کی ماں کا دل اڑا جا رہا تھا وہ اس راز کو فاش کر بیٹھتی اگر ہم اس کی ڈھارس نہ بندھا دیتے تاکہ وہ (ہمارے وعدے پر) ایمان لانے والوں میں سے ہو

تفسير
کے بارے میں معلومات :
القصص
القرآن الكريم:القصص
آية سجدہ (سجدة):-
سورۃ کا نام (latin):Al-Qasas
سورہ نمبر:28
کل آیات:88
کل کلمات:441
کل حروف:5800
کل رکوعات:8
مقام نزول:مکہ مکرمہ
ترتیب نزولی:49
آیت سے شروع:3252