Skip to main content
ARBNDEENIDTRUR
bismillah

يٰۤـاَيُّهَا النَّاسُ اتَّقُوْا رَبَّكُمُ الَّذِىْ خَلَقَكُمْ مِّنْ نَّفْسٍ وَّاحِدَةٍ وَّخَلَقَ مِنْهَا زَوْجَهَا وَبَثَّ مِنْهُمَا رِجَالًا كَثِيْرًا وَّنِسَاۤءً ۚ وَاتَّقُوا اللّٰهَ الَّذِىْ تَسَاۤءَلُوْنَ بِهٖ وَالْاَرْحَامَ ۗ اِنَّ اللّٰهَ كَانَ عَلَيْكُمْ رَقِيْبًا

يٰٓاَيُّھَا النَّاسُ
اے لوگو
اتَّقُوْا
تقوی کرو۔ ڈرو
رَبَّكُمُ
اپنے رب سے۔ کا
الَّذِيْ
وہ جو۔ وہ جس نے
خَلَقَكُمْ
پیدا کیا تم کو
مِّنْ
سے
نَّفْسٍ وَّاحِدَةٍ
ایک جان سے۔ ایک نفس سے
وَّخَلَقَ
اور پیدا کیا
مِنْھَا
اس سے
زَوْجَهَا
اس کا جوڑا
وَبَثَّ
اور پھیلا دیے
مِنْهُمَا
ان دونوں سے
رِجَالًا
مرد
كَثِيْرًا
بہت سے
وَّنِسَاۗءً ۚ
اور عورتیں
وَاتَّقُوا اللّٰهَ
اور ڈرو اللہ سے
الَّذِيْ
وہ ذات
تَسَاۗءَلُوْنَ
تم ایک دوسرے سے سوال کرتے ہو
بِهٖ
ساتھ اس کے (اللہ کے نام کے)
وَالْاَرْحَامَ ۭ
اور رشتہ داریوں (کے بارے میں)
اِنَّ اللّٰهَ
بیشک اللہ تعالیٰ
كَانَ
ہے
عَلَيْكُمْ
تم پر
رَقِيْبًا
نگران

لوگو! اپنے رب سے ڈرو جس نے تم کو ایک جان سے پیدا کیا اور اُسی جان سے اس کا جوڑا بنایا اور ان دونوں سے بہت مرد و عورت دنیا میں پھیلا دیے اُس خدا سے ڈرو جس کا واسطہ دے کر تم ایک دوسرے سے اپنے حق مانگتے ہو، اور رشتہ و قرابت کے تعلقات کو بگاڑنے سے پرہیز کرو یقین جانو کہ اللہ تم پر نگرانی کر رہا ہے

تفسير

وَاٰ تُوا الْيَتٰمٰۤى اَمْوَالَهُمْ وَلَا تَتَبَدَّلُوا الْخَبِيْثَ بِالطَّيِّبِۖ وَلَا تَأْكُلُوْۤا اَمْوَالَهُمْ اِلٰۤى اَمْوَالِكُمْۗ اِنَّهٗ كَانَ حُوْبًا كَبِيْرًا‏

اَمْوَالَھُمْ
اور نہ
وَلَا
تم بدل کر دو
تَتَبَدَّلُوا
ناپاک کو
الْخَبِيْثَ
پاک سے
بِالطَّيِّبِ ۠
اور نہ
وَلَا
تم کھاؤ
تَاْكُلُوْٓا
ان کے مال
اَمْوَالَھُمْ
طرف
اِلٰٓى
اپنے مالوں کے (ملاکر)
اَمْوَالِكُمْ ۭ
یقینا وہ
اِنَّهٗ
ہے
كَانَ
گناہ
حُوْبًا
بہت بڑا
كَبِيْرًا
بہت بڑا

یتیموں کے مال اُن کو واپس دو، اچھے مال کو برے مال سے نہ بدل لو، اور اُن کے مال اپنے مال کے ساتھ ملا کر نہ کھا جاؤ، یہ بہت بڑا گناہ ہے

تفسير

وَاِنْ خِفْتُمْ اَ لَّا تُقْسِطُوْا فِى الْيَتٰمٰى فَانْكِحُوْا مَا طَابَ لَـكُمْ مِّنَ النِّسَاۤءِ مَثْنٰى وَثُلٰثَ وَرُبٰعَ ۚ فَاِنْ خِفْتُمْ اَ لَّا تَعْدِلُوْا فَوَاحِدَةً اَوْ مَا مَلَـكَتْ اَيْمَانُكُمْ ۗ ذٰلِكَ اَدْنٰۤى اَلَّا تَعُوْلُوْا ۗ

وَاِنْ
اور اگر
خِفْتُمْ
ڈرو تم۔ خوف ہو تم کو
اَلَّا
کہ نہ
تُقْسِطُوْا
تم انصاف کرسکو گے
فِي الْيَتٰمٰى
یتیموں میں (یتیموں کے بارے میں)
فَانْكِحُوْا
تو نکاح کرلو
مَا
جو
طَابَ
پسند آئیں
لَكُمْ
تم کو
مِّنَ النِّسَاۗءِ
عورتوں میں سے
مَثْنٰى
دو دو
وَثُلٰثَ
اور تین تین
وَرُبٰعَ ۚ
اور چار چار
فَاِنْ
پھر اگر
خِفْتُمْ
ڈروتم
اَلَّا
کہ نہ
تَعْدِلُوْا
تم عدل کرو گے
فَوَاحِدَةً
تو ایک ہی ہے
اَوْ مَا مَلَكَتْ
یا جن کے مالک ہوئے
اَيْمَانُكُمْ ۭ
تمہارے دائیں ہاتھ
ذٰلِكَ
یہ
اَدْنٰٓى
زیادہ قریب ہے (اس بات کے)
اَلَّا
کہ نہ
تَعُوْلُوْا
تم ایک طرف جھک جاؤ گے۔ تم بےانصافی کرو گے۔ عیالدارانہ بن جاؤ

اور اگر تم یتیموں کے ساتھ بے انصافی کرنے سے ڈرتے ہو تو جو عورتیں تم کو پسند آئیں اُن میں سے دو دو، تین تین، چار چار سے نکاح کرلو لیکن اگر تمہیں اندیشہ ہو کہ اُن کے ساتھ عدل نہ کر سکو گے تو پھر ایک ہی بیوی کرو یا اُن عورتوں کو زوجیت میں لاؤ جو تمہارے قبضہ میں آئی ہیں، بے انصافی سے بچنے کے لیے یہ زیادہ قرین صواب ہے

تفسير

وَاٰ تُوا النِّسَاۤءَ صَدُقٰتِهِنَّ نِحْلَةً ۗ فَاِنْ طِبْنَ لَـكُمْ عَنْ شَىْءٍ مِّنْهُ نَفْسًا فَكُلُوْهُ هَنِيْۤــًٔـا مَّرِیْۤـــٴًﺎ

وَاٰتُوا النِّسَاۗءَ
اور دو عورتوں کو
صَدُقٰتِهِنَّ
ان کے مہر
نِحْلَةٍ ۭ
خوش دلی سے
فَاِنْ
پھر اگر
طِبْنَ
وہ خوشی سے دے دیں
لَكُمْ
تمہارے لیے
عَنْ
سے۔ بارے میں
شَيْءٍ
کسی چیز کے
مِّنْهُ
اس میں سے
نَفْسًا
خود
فَكُلُوْهُ
تو کھاؤ اس کو
هَنِيْۗــــــًٔـا
خوش مزہ ہوکر
مَّرِيْۗـــــــًٔـا
کوش گوار بنا کر

اور عورتوں کے مہر خوش دلی کے ساتھ (فرض جانتے ہوئے) ادا کرو، البتہ اگر وہ خود اپنی خوشی سے مہر کا کوئی حصہ تمہیں معاف کر دیں تو اُسے تم مزے سے کھا سکتے ہو

تفسير

وَلَا تُؤْتُوا السُّفَهَاۤءَ اَمْوَالَـكُمُ الَّتِىْ جَعَلَ اللّٰهُ لَـكُمْ قِيٰمًا وَّارْزُقُوْهُمْ فِيْهَا وَاكْسُوْهُمْ وَقُوْلُوْا لَهُمْ قَوْلًا مَّعْرُوْفًا

وَلَا
اور نہ
تُؤْتُوا
تم دو
السُّفَھَاۗءَ
بیوقوفوں کو
اَمْوَالَكُمُ
اپنے مال
الَّتِىْ
وہ جو
جَعَلَ اللّٰهُ
بنایا اللہ نے
لَكُمْ
تمہارے لیے
قِيٰـمًا
قیام زندگی کا ذریعہ۔ قائم رہنے کا سبب
وَّارْزُقُوْھُمْ
اور رزق دو ان کو
فِيْھَا
اس میں
وَاكْسُوْھُمْ
اور پہناؤ ان کو۔ کپڑا دو ان کو
وَقُوْلُوْا
اور کہو
لَھُمْ قَوْلًا
ان کو بات
مَّعْرُوْفًا
بھلی۔ اچھی

اور اپنے وہ مال جنہیں اللہ نے تمہارے لیے قیام زندگی کا ذریعہ بنایا ہے، نادان لوگوں کے حوالہ نہ کرو، البتہ انہیں کھانے اور پہننے کے لیے دو اور انہیں نیک ہدایت کرو

تفسير

وَابْتَلُوا الْيَتٰمٰى حَتّٰۤى اِذَا بَلَغُوا النِّكَاحَ ۚ فَاِنْ اٰنَسْتُمْ مِّنْهُمْ رُشْدًا فَادْفَعُوْۤا اِلَيْهِمْ اَمْوَالَهُمْۚ وَلَا تَأْكُلُوْهَاۤ اِسْرَافًا وَّبِدَارًا اَنْ يَّكْبَرُوْا ۗ وَمَنْ كَانَ غَنِيًّا فَلْيَسْتَعْفِفْ ۚ وَمَنْ كَانَ فَقِيْرًا فَلْيَأْكُلْ بِالْمَعْرُوْفِ ۗ فَاِذَا دَفَعْتُمْ اِلَيْهِمْ اَمْوَالَهُمْ فَاَشْهِدُوْا عَلَيْهِمْ ۗ وَكَفٰى بِاللّٰهِ حَسِيْبًا

حَتّٰى
جب
اِذَا
وہ پہنچ جائیں
بَلَغُوا
نکاح کی عمر کو
النِّكَاحَ ۚ
پھر اگر
فَاِنْ
پاؤ تم۔ مانوس ہوجاؤ
اٰنَسْتُمْ
ان میں سے
مِّنْھُمْ
بھلائی۔ سمجھ بوجھ۔ اہلیت میں
رُشْدًا
تو دے دو ۔ لوٹا دو
فَادْفَعُوْٓا
ان کو
اِلَيْھِمْ
ان کے مال
اَمْوَالَھُمْ ۚ
اور نہ
وَلَا
تم کھاؤ ان کو
تَاْكُلُوْھَآ
اسراف کرتے ہوئے
اِسْرَافًا
اور جلدی کرتے ہوئے
وَّبِدَارًا
کہ وہ بڑے ہوجائیں گے
اَنْ يَّكْبَرُوْا ۭ
اور جو کوئی
وَمَنْ
ہو
كَانَ
امیر۔ غنی۔ مالدار
غَنِيًّا
پس چاہیے کہ وہ عفت سے کام لے۔ پرہیزگاری سے کام لے
فَلْيَسْتَعْفِفْ ۚ
اور جو کوئی ہو
وَمَنْ كَانَ
محتاج
فَقِيْرًا
تو چاہیے کہ وہ کھائے
فَلْيَاْكُلْ
ساتھ معروف کے۔ بھلے طریقے سے
بِالْمَعْرُوْفِ ۭ
پھر جب
فَاِذَا
دے دو تم
دَفَعْتُمْ
ان کو
اِلَيْھِمْ
ان کے مال
اَمْوَالَھُمْ
تو گواہ بنا لو
فَاَشْهِدُوْا
اوپر ان کے۔ ان پر
عَلَيْھِمْ ۭ
اور کافی ہے
وَكَفٰى
اللہ
بِاللّٰهِ
حساب لینے والا
حَسِـيْبًا
حساب لینے والا

اور یتیموں کی آزمائش کرتے رہو یہاں تک کہ وہ نکاح کے قابل عمر کو پہنچ جائیں پھر اگر تم اُن کے اندر اہلیت پاؤ تو اُن کے مال اُن کے حوالے کر دو ایسا کبھی نہ کرنا کہ حد انصاف سے تجاوز کر کے اِس خوف سے اُن کے مال جلدی جلدی کھا جاؤ کہ وہ بڑے ہو کر اپنے حق کا مطالبہ کریں گے یتیم کا جو سرپرست مال دار ہو وہ پرہیز گاری سے کام لے اور جو غریب ہو وہ معروف طریقہ سے کھائے پھر جب اُن کے مال اُن کے حوالے کرنے لگو تو لوگوں کو اس پر گواہ بنا لو، اور حساب لینے کے لیے اللہ کافی ہے

تفسير

لِلرِّجَالِ نَصِيْبٌ مِّمَّا تَرَكَ الْوَالِدٰنِ وَالْاَقْرَبُوْنَۖ وَلِلنِّسَاۤءِ نَصِيْبٌ مِّمَّا تَرَكَ الْوَالِدٰنِ وَالْاَقْرَبُوْنَ مِمَّا قَلَّ مِنْهُ اَوْ كَثُرَ ۗ نَصِيْبًا مَّفْرُوْضًا

لِلرِّجَالِ
مردوں کے لیے
نَصِيْبٌ
ایک حصہ ہے
مِّمَّا
اس میں سے جو
تَرَكَ
چھوڑ جائیں
الْوَالِدٰنِ
والدین
وَالْاَقْرَبُوْنَ ۠
اور رشتہ دار
وَلِلنِّسَاۗءِ
اور عورتوں کے لیے
نَصِيْبٌ
ایک حصہ ہے
مِّمَّا
اس میں سے جو
تَرَكَ
چھوڑ جائیں
الْوَالِدٰنِ
والدین
وَالْاَقْرَبُوْنَ
اور رشتہ دار
مِمَّا
اس میں سے جو
قَلَّ
کم ہو۔ قلیل ہو
مِنْهُ
اس میں سے
اَوْ
یا
كَثُرَ ۭ
زیادہ ہو۔ کثرت سے ہو
نَصِيْبًا
حصہ ہے
مَّفْرُوْضًا
مقرر کیا ہوا

مردوں کے لیے اُس مال میں حصہ ہے جو ماں باپ اور رشتہ داروں نے چھوڑا ہو، اور عورتوں کے لیے بھی اُس مال میں حصہ ہے جو ماں باپ اور رشتہ داروں نے چھوڑا ہو، خواہ تھوڑا ہو یا بہت، اور یہ حصہ (اللہ کی طرف سے) مقرر ہے

تفسير

وَاِذَا حَضَرَ الْقِسْمَةَ اُولُوا الْقُرْبٰى وَالْيَتٰمٰى وَالْمَسٰكِيْنُ فَارْزُقُوْهُمْ مِّنْهُ وَقُوْلُوْا لَهُمْ قَوْلًا مَّعْرُوْفًا

وَاِذَا
اور جب
حَضَرَ
حاضر ہوں
الْقِسْمَةَ
تقسیم کے وقت
اُولُوا الْقُرْبٰي
رشتہ دار
وَالْيَتٰمٰى
اور یتیم
وَالْمَسٰكِيْنُ
اور مسکین۔ محتاج
فَارْزُقُوْھُمْ
تو رزق دو ان کو
مِّنْهُ
اس میں سے
وَقُوْلُوْا
اور کہو
لَھُمْ
ان کو
قَوْلًا
بات
مَّعْرُوْفًا
بھلی

اور جب تقسیم کے موقع پر کنبہ کے لوگ اور یتیم اور مسکین آئیں تو اس مال میں سے ان کو بھی کچھ دو اور اُن کے ساتھ بھلے مانسوں کی سی بات کرو

تفسير

وَلْيَخْشَ الَّذِيْنَ لَوْ تَرَكُوْا مِنْ خَلْفِهِمْ ذُرِّيَّةً ضِعٰفًا خَافُوْا عَلَيْهِمْ ۖفَلْيَتَّقُوا اللّٰهَ وَلْيَقُوْلُوا قَوْلًا سَدِيْدًا

وَلْيَخْشَ
اور چاہیے کہ ڈریں
الَّذِيْنَ
وہ لوگ
لَوْ تَرَكُوْا
اگر وہ چھوڑ جائیں
مِنْ خَلْفِھِمْ
اپنے پیچھے سے
ذُرِّيَّةً
اولاد
ضِعٰفًا
کمزور
خَافُوْا
وہ ڈرتے ہیں
عَلَيْھِمْ ۠
ان پر۔ ان کے بارے میں
فَلْيَتَّقُوا اللّٰهَ
پس چاہیے کہ ڈریں اللہ سے
وَلْيَقُوْلُوْا
اور چاہیے کہ کہیں
قَوْلًا
بات
سَدِيْدًا
درست۔ محکم

لوگوں کو اس بات کا خیال کر کے ڈرنا چاہیے کہ اگر وہ خود اپنے پیچھے بے بس اولاد چھوڑتے تو مرتے وقت انہیں اپنے بچوں کے حق میں کیسے کچھ اندیشے لاحق ہوتے پس چاہیے کہ وہ خدا کا خوف کریں اور راستی کی بات کریں

تفسير

اِنَّ الَّذِيْنَ يَأْكُلُوْنَ اَمْوَالَ الْيَتٰمٰى ظُلْمًا اِنَّمَا يَأْكُلُوْنَ فِىْ بُطُوْنِهِمْ نَارًا ۗ وَسَيَـصْلَوْنَ سَعِيْرًا

اِنَّ الَّذِيْنَ
بیشک وہ لوگ
يَاْكُلُوْنَ
جو کھاتے ہیں
اَمْوَالَ الْيَتٰمٰى
مال یتیموں کے
ظُلْمًا
طلم کے ساتھ
اِنَّمَا
بیشک
يَاْكُلُوْنَ
وہ کھاتے ہیں
فِيْ بُطُوْنِھِمْ
اپنے پیٹوں میں
نَارًا ۭ
آگ
وَسَيَصْلَوْنَ
اور عنقریب وہ داخل ہوں گے
سَعِيْرًا
بھڑکتی ہوئی آگ میں

جو لوگ ظلم کے ساتھ یتیموں کے مال کھاتے ہیں در حقیقت وہ اپنے پیٹ آگ سے بھرتے ہیں اور وہ ضرور جہنم کی بھڑکتی ہوئی آگ میں جھونکے جائیں گے

تفسير
کے بارے میں معلومات :
النساء
القرآن الكريم:النساء
آية سجدہ (سجدة):-
سورۃ کا نام (latin):An-Nisa'
سورہ نمبر:4
کل آیات:176
کل کلمات:3054
کل حروف:6030
کل رکوعات:24
مقام نزول:مدینہ منورہ
ترتیب نزولی:92
آیت سے شروع:493